میانمار روہنگیا مسلمانوں کا قتل عام روکے .عالمی عدالت انصاف

اقوام متحدہ کی عالمی عدالت انصاف نے میانمار کو حکم دیا ہے کہ وہ روہنگیا مسلمانوں کا قتل عام روکے۔دی ہیگ میں عالمی عدالت انصاف نے کہا ہے کہ میانمار اپنے اختیار کے اندر روہنگیا مسلمانوں کو تحفظ فراہم کرے۔ واضح رہے کہ روہنگیا مسلمانوں کی نسل کشی کے خلاف افریقی ملک گیمبیا نے درخواست دی تھی۔

یہ درخواست 1948 کے جینوسائیڈ کنونشن کے تحت دی گئی تھی۔یاد رہے کہ کچھ عرصہ پہلے میانمار میں ہزاروں روہنگیا مسلمانوں کا نہ صرف قتل عام کیا گیا تھا بلکہ خواتین کے ساتھ اجتماعی زیادتی، زندہ انسانوں کے اعضا کاٹنے سمیت انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں سامنے آئی تھیں، بعض مقامات پر سرکاری فوج اور پولیس کی سرپرستی میں مسلمانوں کے گھر جلانے کے واقعات بھی پیش آئے۔ اس صورتحال کے سبب لاکھوں مسلمان اپنی جانیں بچانے کے لئے بنگلہ دیش اور دوسرے ممالک میں ہجرت کرنے پر مجبور ہوئے اور مسلمانوں کو شدید جانی نقصان بھی برداشت کرنا پڑا۔
 

Care to Share?

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

5 × 1 =