جمعہ, فروری 9 https://www.rt.com/on-air/ Live
Shadow
سرخیاں
صدر ایردوعان کا اقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں رنگ برنگے بینروں پر اعتراض، ہم جنس پرستی سے مشابہہ قرار دے دیا، معاملہ سیکرٹری جنرل کے سامنے اٹھانے کا عندیامغرب روس کو شکست دینے کے خبط میں مبتلا ہے، یہ ان کے خود کے لیے بھی خطرناک ہے: جنرل اسمبلی اجلاس میں سرگئی لاوروو کا خطاباروناچل پردیش: 3 کھلاڑی چین اور ہندوستان کے مابین متنازعہ علاقے کی سیاست کا نشانہ بن گئے، ایشیائی کھیلوں کے مقابلے میں شامل نہ ہو سکےایشیا میں امن و استحکام کے لیے چین کا ایک اور بڑا قدم: شام کے ساتھ تذویراتی تعلقات کا اعلانامریکی تاریخ کی سب سے بڑی خفیہ و حساس دستاویزات کی چوری: انوکھے طریقے پر ادارے سر پکڑ کر بیٹھ گئےیورپی کمیشن صدر نے دوسری جنگ عظیم میں جاپان پر جوہری حملے کا ذمہ دار روس کو قرار دے دیااگر خطے میں کوئی بھی ملک جوہری قوت بنتا ہے تو سعودیہ بھی مجبور ہو گا کہ جوہری ہتھیار حاصل کرے: محمد بن سلمانمغربی ممالک افریقہ کو غلاموں کی تجارت پر ہرجانہ ادا کریں: صدر گھانامغربی تہذیب دنیا میں اپنا اثر و رسوخ کھو چکی، زوال پتھر پہ لکیر ہے: امریکی ماہر سیاستعالمی قرضوں میں ریکارڈ اضافہ: دنیا، بنکوں اور مالیاتی اداروں کی 89 پدم روپے کی مقروض ہو گئی

Tag: چین، ہندوستان، اروناچل پردیش، متناعہ علاقہ، سرحدی سیاست، کھلاڑی، ایشیائی مقابلے،

اروناچل پردیش: 3 کھلاڑی چین اور ہندوستان کے مابین متنازعہ علاقے کی سیاست کا نشانہ بن گئے، ایشیائی کھیلوں کے مقابلے میں شامل نہ ہو سکے

اروناچل پردیش: 3 کھلاڑی چین اور ہندوستان کے مابین متنازعہ علاقے کی سیاست کا نشانہ بن گئے، ایشیائی کھیلوں کے مقابلے میں شامل نہ ہو سکے

سیاست
چین نے اروناچل پردیش سے تعلق رکھنے والے 3 کھلاڑیوں کو ایشیائی کھیلوں کے مقابلے میں ہندوستان کی نمائندگی کرنے سے روک دیا ہے۔ کھلاڑیوں کو ہانگ کانگ سے مقابلے کے شہر ہانگزو کی پرواز میں سوار ہی نہیں ہونے دیا گیا۔ واضح رہے کہ اروناچل پردیش چین اور ہندوستان کے مابین متنازعہ علاقہ ہے، جس کے رہائشیوں کو چین اپنے باشندے مانتا ہے اور یہی وجہ ہے کہ وہاں کے کھلاڑیوں کو ہندوستان کی بین الاقوامی مقابلوں میں نمائندگی کی اجازت نہیں دی گئی۔ ہندوستان نے معاملے پر احتجاج کیا ہے اور اسے تفریقی رویہ قرار دیتے ہوئے چین پر سخت تنقید کی ہے۔ جبکہ چین کی جانب سے وضاحت میں کہا گیا ہے کہ مذکورہ کھلاڑیوں کو چینی ویزہ جاری نہیں کیا گیا تھا، بلکہ ایک متنازعہ علاقے کے باشندے ہونے کا دستاویز جاری کیا گیا تھا، جس پر کھلاڑی بین الاقوامی مقابلوں میں حصہ لے سکتے تھے تاہم ہندوستان نے اپنے پاسپورٹ پر سفر کرنے کی ض...

Contact Us