ہفتہ, فروری 24 https://www.rt.com/on-air/ Live
Shadow
سرخیاں
صدر ایردوعان کا اقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں رنگ برنگے بینروں پر اعتراض، ہم جنس پرستی سے مشابہہ قرار دے دیا، معاملہ سیکرٹری جنرل کے سامنے اٹھانے کا عندیامغرب روس کو شکست دینے کے خبط میں مبتلا ہے، یہ ان کے خود کے لیے بھی خطرناک ہے: جنرل اسمبلی اجلاس میں سرگئی لاوروو کا خطاباروناچل پردیش: 3 کھلاڑی چین اور ہندوستان کے مابین متنازعہ علاقے کی سیاست کا نشانہ بن گئے، ایشیائی کھیلوں کے مقابلے میں شامل نہ ہو سکےایشیا میں امن و استحکام کے لیے چین کا ایک اور بڑا قدم: شام کے ساتھ تذویراتی تعلقات کا اعلانامریکی تاریخ کی سب سے بڑی خفیہ و حساس دستاویزات کی چوری: انوکھے طریقے پر ادارے سر پکڑ کر بیٹھ گئےیورپی کمیشن صدر نے دوسری جنگ عظیم میں جاپان پر جوہری حملے کا ذمہ دار روس کو قرار دے دیااگر خطے میں کوئی بھی ملک جوہری قوت بنتا ہے تو سعودیہ بھی مجبور ہو گا کہ جوہری ہتھیار حاصل کرے: محمد بن سلمانمغربی ممالک افریقہ کو غلاموں کی تجارت پر ہرجانہ ادا کریں: صدر گھانامغربی تہذیب دنیا میں اپنا اثر و رسوخ کھو چکی، زوال پتھر پہ لکیر ہے: امریکی ماہر سیاستعالمی قرضوں میں ریکارڈ اضافہ: دنیا، بنکوں اور مالیاتی اداروں کی 89 پدم روپے کی مقروض ہو گئی

وینزویلا نے امریکہ کو آنکھیں دکھا دیں ۔ روسی قرضوں کی ادائیگی روبل میں کی

روسی نائب وزیر خزانہ سیرگی اسٹورچاک کے مطابق ، کاراکاس نے روبل کا استعمال کرتے ہوئے اپنے تازہ ترین طے شدہ قرض کی ادائیگی ماسکو منتقل کردی ہے۔

عہدیدار نے منگل کو روسی آر بی سی کو بتایا کہ روس اپنے تمام قرضداروں کو روبل میں ادائیگی کرنے کا موقع فراہم کرتا ہے۔ اس سے قبل یہ بھی بتایا گیا تھا کہ وینزویلا نے ماسکو سے 3.15 بلین ڈالر کے قرض کی ادائیگی کی منتقلی کی ہے ، لیکن ادا کی گئی کرنسی اور رقم کا انکشاف نہیں کیا گیا۔

وینزویلا کی حکومت کو واشنگٹن کی طرف سے سخت پابندیوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے جس میں اس کے تیل کے شعبے پر پابندیاں بھی شامل ہیں جو ملک کے محصولات کے لئے انتہائی ضروری ہے۔ چونکہ ملک کا مرکزی بینک بھی امریکی ہٹ لسٹ میں شامل تھا ، لہٰذاریگولیٹر کے لئے ادائیگی کو امریکی ڈالر میں منتقل کرنا تقریبا ناممکن ہوگیا تھا۔

ابتدائی طور پر کاراکاس نے روس کو لگ بھگ سوملین ڈالرکی ادائیگی کی تھی اور توقع کی جاتی تھی کہ آئندہ موسم خزاں میں مزید 200 ملین ڈالر کی منتقلی کی جائے گی۔ اس وقت ، یہ اطلاعات موصول ہوئی تھیں کہ وینزویلا تیل یا سونے کی ادائیگی سمیت بارٹر کا استعمال بھی کرسکتا ہے۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

1 × two =

Contact Us