پیر, اکتوبر 2 https://www.rt.com/on-air/ Live
Shadow
سرخیاں
صدر ایردوعان کا اقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں رنگ برنگے بینروں پر اعتراض، ہم جنس پرستی سے مشابہہ قرار دے دیا، معاملہ سیکرٹری جنرل کے سامنے اٹھانے کا عندیامغرب روس کو شکست دینے کے خبط میں مبتلا ہے، یہ ان کے خود کے لیے بھی خطرناک ہے: جنرل اسمبلی اجلاس میں سرگئی لاوروو کا خطاباروناچل پردیش: 3 کھلاڑی چین اور ہندوستان کے مابین متنازعہ علاقے کی سیاست کا نشانہ بن گئے، ایشیائی کھیلوں کے مقابلے میں شامل نہ ہو سکےایشیا میں امن و استحکام کے لیے چین کا ایک اور بڑا قدم: شام کے ساتھ تذویراتی تعلقات کا اعلانامریکی تاریخ کی سب سے بڑی خفیہ و حساس دستاویزات کی چوری: انوکھے طریقے پر ادارے سر پکڑ کر بیٹھ گئےیورپی کمیشن صدر نے دوسری جنگ عظیم میں جاپان پر جوہری حملے کا ذمہ دار روس کو قرار دے دیااگر خطے میں کوئی بھی ملک جوہری قوت بنتا ہے تو سعودیہ بھی مجبور ہو گا کہ جوہری ہتھیار حاصل کرے: محمد بن سلمانمغربی ممالک افریقہ کو غلاموں کی تجارت پر ہرجانہ ادا کریں: صدر گھانامغربی تہذیب دنیا میں اپنا اثر و رسوخ کھو چکی، زوال پتھر پہ لکیر ہے: امریکی ماہر سیاستعالمی قرضوں میں ریکارڈ اضافہ: دنیا، بنکوں اور مالیاتی اداروں کی 89 پدم روپے کی مقروض ہو گئی

امریکی ڈالر کی حمایت ۔ ہر طرح کی دھوکہ دہی کے ارتکاب کا اجازت نامہ – جے پی مورگن اسکینڈل پر میکس قیصر کا خیال۔

میکس قیصر کا خیال ہے کہ امریکی حکام کو معلوم تھا کہ جے پی مورگن کے تین تاجر شروع سے ہی قیمتی دھاتوں کی منڈیوں میں ہیرا پھیری کر رہے ہیں اور جان بوجھ کر “دوسرے راستے پر نظر ڈال رہے ہیں ۔

” میکس قیصر کے مطابق ایرک ہولڈر ، جو [سابق امریکی صدر باراک] اوبامہ کے دور میں اٹارنی جنرل تھے ، جب پہلی بار منظر عام پر آئے، تو انہوں نے کہا کہ مارکیٹ کی ہیرا پھیری اور دھوکہ دہی امریکی معیشت کے لئے اہم ہے اور وہ اٹارنی جنرل کی حیثیت سے قانونی چارہ جوئی نہیں کرسکتے ہیں۔ آر ٹی کی قیصر رپورٹ کے میزبان کا کہنا ہے کہ ، جے پی مورگن کے جعل سازوں اور پسندیدگان کو جیل سے بھی بڑی جیل یعنی”لمبی مدت کے لیے جیل جانا” چاہیے۔

اور یہ جیل سے بھی بڑی جیل والا معاملہ امریکہ کے قانونی منظرنامے کا ایک حصہ تھا۔ کیونکہ بینکروں کو بڑے پیمانے پر دھوکہ دہی کے لئے گرین سگنلز مل رہے تھے۔حقیقت یہ ہے کہ جے پی مورگن میں قیمتی دھاتوں کے تاجروں نے جعلی تجارتوں کے ذریعہ لاکھوں کمائے ۔” سپوفنگ ” نامی قیمتوں میں جوڑ توڑ کی مجرمانہ سازش کا کام کرنا ، برسوں سے کھلا راز ہے ، خود میکس نے اس اسکیم کو 2011 میں بیان کیا ہے۔۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

14 + nineteen =

Contact Us