منگل, اکتوبر 27 Live
Shadow

خلیج تعاون کونسل: ایران پر اسلحے کی پابندی میں توسیع کا مطالبہ

عرب ممالک کی تنظیم خلیج تعاون کونسل نے اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا ہے کہ خطے میں پائیدار امن اور استحکام کے لیے ایران پر عائد اسلحے کی پابندی میں مزید توسیع کی جائے۔

عرب ذرائع ابلاغ کے مطابق چھ خلیجی عرب ممالک کی تنظیم نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کو ایک خط میں لکھا ہے کہ ایران پر اسلحہ کی پابندی میں مزید توسیع کی جائے تاکہ خطے میں اسکی شر پسند کارروائیوں کو روکا جا سکے۔ یہ خط اس وقت لکھا گیا ہے جب ایران پر اسلحے کی پابندی کی مدت کے خاتمے میں صرف دو ماہ رہ گئے ہیں۔

خلیجی ممالک نے اپنے خط میں کہا ہے کہ ایران لبنان اور حزب اللہ کے جنگجوؤں کو اسلحہ فراہم کرتا ہے نیز شام، بحرین، کویت اور سعودی عرب میں دہشت گرد گروپوں کی پشت پناہی کر رہا ہے۔ ایران کے اس عمل میں ہمسائیہ ممالک میں غیر یقینی صورت حال اور امن عامہ کا مسئلہ پیدا ہوگیا ہے۔

چھ خلیج ممالک بحرین، کویت، عمان، قطر، سعودی اور متحدہ عرب امارات پر مشتمل تنظیم ’’جی سی سی‘‘ یعنی  گلف کوآپریشن کونسل ایران کی ہمسائیہ ممالک میں مسلح مداخلت اور بے امنی پھیلانے پر شدید نالاں ہے اور اسے روکنے کے لیے ہر ممکن کارروائی کر رہی ہے۔

واضح رہے کہ عالمی سطح قوتوں اور اداروں کی جانب سے ایران پر عائد پابندیوں کی وجہ سے ایران غیر ملکی ساختہ ہتھیار، جہاز، ٹینک اور دیگر جنگی ساز و سامان نہیں خرید سکتا۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں