اتوار, April 10 Live
Shadow
سرخیاں
افغانستان میں امریکی فوج کی جانب سے تشدد کی تربیت کے لیے بلوچی قیدی کو استعمال کرنے کا انکشافہندوستانی میزائل کا مبینہ غلطی سے پاکستانی حدود میں گرنے کا واقعہ: امریکہ کی طرف سے متعصب جبکہ چین کی جانب سے نصیحت آمیز ردعملمیٹا آسٹریلوی سیاستدانوں کو سائبر حملوں اور جھوٹی خبروں سے بچنے کی تربیت دے گییوکرین: مغربی ممالک سے آئے 180 سے زائد جنگجو ہوائی حملے میں ہلاک، روس کی مغربی ممالک کو تنبیہ، سب نشانے پر ہیں، چُن چُن کر ماریں گےاسرائیل پر تاریخ کا بڑا سائبر حملہ: وزیراعظم، وزارت داخلہ اور وزارت صیہونی بہبود کی ویب سائٹیں ہیک اور تلفروس اور یوکرین کے مابین جلد امن معاہدہ طے پا جائے گا: روسی مذاکرات کاریوکرینی مہاجرین کی تعداد 50 لاکھ سے بڑھ گئی: اقوام متحدہفیس بک اور انسٹاگرام کی شدید متعصب پالیسی کا اعلان: روسی صدر اور فوج کیخلاف نفرت اور موت کے پیغامات شائع کرنے کی اجازت، نتیجتاً مغربی ممالک میں آرتھوڈاکس کلیساؤں اور روسی کاروباروں پر حملوں کی خبریںترکی کا بھی روس کے ساتھ مقامی پیسے میں تجارت کرنے کا اعلانمغرب کے دوہرے معیار: دنیا پر روس سے تجارت پر پابندیاں، برطانیہ سمیت بیشتر مغربی ممالک روس سے گیس و تیل کی خریداری جاری رکھیں گے

افریقہ بھی پولیو سے پاک قرار، پاکستان اور افغانستان میں مہم جاری رہے گی

عالمی ادارہ صحت نے نائجیریا میں پولیو کے نئے کیسز سامنے نہ آنے پر براعظم افریقہ کو وائلڈ پولیو سے پاک قرار دیدیا ہے۔

عالمی ادارہ صحت کی جانب سے شمال مشرقی نائجیریا میں پولیو کے آخری کیس سامنے آنے کے چار سال بعد عالمی ادارہ صحت نے براعظم افریقہ میں وائلڈ پولیو کے خاتمے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومتوں، مالی امداد فراہم کرنے والے اداروں، پولیو ویکسین کے لیے کام کرنے والے رضا کاروں اور مقامی اشرافیہ کی انتھک کوششوں کی بدولت 1.8 ملین بچوں کو پولیو جیسے موزی مرض سے بچالیا ہے۔

نائجیریا آخری افریقی ملک ہے جس کو وائلڈ پولیو سے پاک قرار دیدیا گیا ہے۔ نائجیریا میں آخری کیس چار سال قبل سامنے آیا تھا اور اس کے خاتمے کے لیے نائجیریا نے نصف دہائی سے بھی کم عرصے میں پولیو کو شکست فاش دیدی۔ نائجیریا میں خاتمے کے بعد یہ بیماری اب صرف افغانستان اور پاکستان میں رہ گئی ہے۔

پولیو عام طور پر پانچ سال سے کم عمر بچوں کو متاثر کرتا ہے، اور بعض اوقات بچوں میں ناقابل واپسی مفلوج کا باعث بنتا ہے۔ اس موزی وائرس سے موت بھی واقع ہوسکتی ہے اور اس کے علاوہ سانس لینے والے عضلات بھی فالج سے متاثر سکتے ہیں۔

پولیو وائرس سے ہونے والی بیماری کا کوئی علاج نہیں ہے، صرف پولیو ویکسین ہی بچوں کو زندگی بھر کی معذوری سے بچا سکتی ہے۔ یہ پولیو ایک ایسا وائرس ہے جو عام طور پر آلودہ پانی کے ذریعے ایک انسان سے دوسرے انسان تک پھیلتا ہے۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us