Shadow
سرخیاں
پولینڈ: یوکرینی گندم کی درآمد پر کسانوں کا احتجاج، سرحد بند کر دیخود کشی کے لیے آن لائن سہولت، بین الاقوامی نیٹ ورک ملوث، صرف برطانیہ میں 130 افراد کی موت، چشم کشا انکشافاتپوپ فرانسس کی یک صنف سماج کے نظریہ پر سخت تنقید، دور جدید کا بدترین نظریہ قرار دے دیاصدر ایردوعان کا اقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں رنگ برنگے بینروں پر اعتراض، ہم جنس پرستی سے مشابہہ قرار دے دیا، معاملہ سیکرٹری جنرل کے سامنے اٹھانے کا عندیامغرب روس کو شکست دینے کے خبط میں مبتلا ہے، یہ ان کے خود کے لیے بھی خطرناک ہے: جنرل اسمبلی اجلاس میں سرگئی لاوروو کا خطاباروناچل پردیش: 3 کھلاڑی چین اور ہندوستان کے مابین متنازعہ علاقے کی سیاست کا نشانہ بن گئے، ایشیائی کھیلوں کے مقابلے میں شامل نہ ہو سکےایشیا میں امن و استحکام کے لیے چین کا ایک اور بڑا قدم: شام کے ساتھ تذویراتی تعلقات کا اعلانامریکی تاریخ کی سب سے بڑی خفیہ و حساس دستاویزات کی چوری: انوکھے طریقے پر ادارے سر پکڑ کر بیٹھ گئےیورپی کمیشن صدر نے دوسری جنگ عظیم میں جاپان پر جوہری حملے کا ذمہ دار روس کو قرار دے دیااگر خطے میں کوئی بھی ملک جوہری قوت بنتا ہے تو سعودیہ بھی مجبور ہو گا کہ جوہری ہتھیار حاصل کرے: محمد بن سلمان

Russian, Turkish troops conclude 2nd joint patrolling mission in N. Syria

Russian, Turkish troops conclude 2nd joint patrolling mission in N. Syria

Russia’s military police and Turkey’s border guard service have finished the second joint patrol mission along the border with Turkey in northern Syria, the Russian Defense Ministry said on Tuesday.

The patrolling was conducted to the east of the Euphrates with the participation of unmanned aerial vehicles, TASS reported, citing the statement. Eight units of machinery, four from each side, took part in the patrol mission in the area of Ayn al-Arab. The length of the Turkish-Russian patrol route reached 73km.

The joint patrol mission set off from the Aylishar customs checkpoint and involved about 50 Russian and Turkish servicemen, eight armored vehicles, including Russian Tigr and Turkish armored cars, and an Orlan-10 unmanned aerial vehicle of the Russian military police that surveyed the situation along the patrol’s route.

The deadline for the Kurdish forces to withdraw from the area expired on October 29. Turkey and Russia began joint patrolling in northeastern Syria on November 1.



Russian, Turkish troops conclude 2nd joint patrolling mission in N. Syria

Source: RT

دوست و احباب کو تجویز کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

13 − three =

Contact Us