ہفتہ, April 9 Live
Shadow
سرخیاں
افغانستان میں امریکی فوج کی جانب سے تشدد کی تربیت کے لیے بلوچی قیدی کو استعمال کرنے کا انکشافہندوستانی میزائل کا مبینہ غلطی سے پاکستانی حدود میں گرنے کا واقعہ: امریکہ کی طرف سے متعصب جبکہ چین کی جانب سے نصیحت آمیز ردعملمیٹا آسٹریلوی سیاستدانوں کو سائبر حملوں اور جھوٹی خبروں سے بچنے کی تربیت دے گییوکرین: مغربی ممالک سے آئے 180 سے زائد جنگجو ہوائی حملے میں ہلاک، روس کی مغربی ممالک کو تنبیہ، سب نشانے پر ہیں، چُن چُن کر ماریں گےاسرائیل پر تاریخ کا بڑا سائبر حملہ: وزیراعظم، وزارت داخلہ اور وزارت صیہونی بہبود کی ویب سائٹیں ہیک اور تلفروس اور یوکرین کے مابین جلد امن معاہدہ طے پا جائے گا: روسی مذاکرات کاریوکرینی مہاجرین کی تعداد 50 لاکھ سے بڑھ گئی: اقوام متحدہفیس بک اور انسٹاگرام کی شدید متعصب پالیسی کا اعلان: روسی صدر اور فوج کیخلاف نفرت اور موت کے پیغامات شائع کرنے کی اجازت، نتیجتاً مغربی ممالک میں آرتھوڈاکس کلیساؤں اور روسی کاروباروں پر حملوں کی خبریںترکی کا بھی روس کے ساتھ مقامی پیسے میں تجارت کرنے کا اعلانمغرب کے دوہرے معیار: دنیا پر روس سے تجارت پر پابندیاں، برطانیہ سمیت بیشتر مغربی ممالک روس سے گیس و تیل کی خریداری جاری رکھیں گے

خامنہ ای اور امریکی وزیر خارجہ میں ٹویٹر پر لفاظی گولہ باری: ایرانی سپریم لیڈر نے امریکی لبرل جمہوریت کے زوال کی پیشن گوئی کی تو پومپیو نے چور کہہ ڈالا

ایرانی سپریم لیڈر علی خامنہ ای نے امریکی انتخابات اور انکے نتائج پر اپنے تبصرے میں کہا ہے کہ یہی امریکی لبرل جمہوری نظام کا حقیقی چہرہ ہے، اگلا صدر جو بھی ہو اس کے نتیجے میں امریکی سیاسی، عوامی اور اخلاقی زوال یقینی ہے۔

ایرانی قیادت کے جواب میں امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ تم نے عوام کے کروڑوں ڈالر لوٹے، تمہارے انتخابات ایک ڈھونگ ہیں، جس میں سینکڑوں لوگ مقابلہ کیے بغیر دوڑ سے باہر نکال دیے جاتے ہیں، تمہارے لوگ بھوک سے مر رہے ہیں کیونکہ تم نے اپنا چوروں کا اقتدار بچانے کے لیے کروڑوں ہمسایہ ممالک میں دہشت گرد گروہوں پر لگا دیے۔

امریکی وزیر خارجہ نے مزید کہا کہ امریکہ انسانی تہذیب کی سب سے عظیم قوم رہے گا، اور ہم اس دن کے انتظار میں رہیں گے جب تمہاری قوم وہ دن دیکھے جس کا انہیں انتظار ہے، اور تمہیں خوب پتہ ہے کہ وہ دن کونسا ہے۔

یاد رہے کہ امریکہ اور ایران کے مابین تعلقات صدر ٹرمپ کے دور حکومت میں پہلے سے بھی بدتر رہے، اور صدر ٹرمپ، صدر اوباما کی جانب سے کیے 2015 کے معاہدے سے بھی دستبردار ہو گئے۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us