اتوار, نومبر 28 Live
Shadow
سرخیاں
نائیجیر: فرانسیسی فوج کی فائرنگ سے 2 شہری شہید، 16 زخمیامریکی فوج میں ہر 4 میں سے 1 عورت اور 5 میں سے 1 مرد جنسی زیادتی کا نشانہ بنتا ہے، بیشتر خود کشی کر لیتے، کورٹ مارشل کے خوف سے کوئی آواز نہیں اٹھاتا: سابقہ اہلکارروس کا غیر ملکی سماجی میڈیا کمپنیوں پر ملک میں کاروباری اندراج کے لیے دباؤ جاری: رواں سال کے آخر تک عمل نہ ہونے پر پابندی لگانے کا عندیاامریکہ ہائپر سونک ٹیکنالوجی میں چین اور روس سے بہت پیچھے ہے: امریکی جنرل تھامپسنامریکی تفریحی میڈیا صنعت کس عقیدے، نظریے اور مقصد کے تحت کام کرتی ہے؟چوالیس فیصد امریکی اولاد پیدا کرنے کی خواہش نہیں رکھتے: پیو سروے رپورٹچینی کمپنی ژپینگ نے جدید ترین برقی کار جی-9 متعارف کر دی: بیٹری کے معیار اور رفتار میں ٹیسلا کو بھی پیچھے چھوڑ دیاماحولیاتی تحفظ کی مہم کیوں ناکام ہے؟: کینیڈی پروفیسر نے امیر مغربی ممالک کو زمہ دار ٹھہرا دیااتحادیوں کو اکیلا نہیں چھوڑا جائے گا، تحفظ ہر صورت یقینی بنائیں گے: امریکی وزیردفاعروس اس وقت آزاد دنیا کا قائد ہے: روسی پادری اعظم کا عیسائی گھرانوں کی امریکہ سے روس منتقلی پر تبصرہ

امریکہ میں کورونا کے باعث تالہ بندی سے کتنا مالی نقصان ہوا، اور کتنی جانیں بچائی جا سکیں؟

امریکہ میں محققین کے ایک گروہ نے کورونا کے باعث بند ہونے والے کاروبار اور اسکی وجہ سے ہونے والے مالی نقصان اور جانی بچاؤ کے حوالے سے ایک رپورٹ مرتب کی ہے۔ رپورٹ کے مطابق کاروبار بند کرنے سے مارچ سے مئی کے دوران ملک کو 169 ارب ڈالر کا مالی نقصان ہوا جبکہ 29000 زندگیاں بچائی جا سکیں۔

یوں فی آدمی 60 لاکھ ڈالر کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔ رپورٹ کے مطابق اس دوران بے روزگاری نے بھی ریکارڈ توڑے اور فروری میں جو بےروزگاری 3 اعشاریہ 5 فیصد کی کم ترین سطح پر تھی، وہی اپریل میں اچانک 14 اعشاریہ 7 فیصد ہو گئی۔

رپورٹ کے مطابق تالہ بندی سے امریکی معیشت کو بدترین نقصان ہوا، اور امریکیوں نے انفرادی آزادی کے حوالے سے حکومتی کردار پر سوال اٹھائے۔ رپورٹ کے مطابق مخالفین نے بھی اس پراپیگنڈے میں کردار ادا کیا اور ٹرمپ حکومت کو ہر حوالے سے سخت وقت کا سامنا رہا۔

قومی سطح کے اعدادوشمار کا تجزیہ کرتے ہوئے رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ تالہ بندی سے امریکی قومی پیداوار میں صفر اعشاریہ 8 فیصد کی کمی ہوئی جبکہ اموات کی شرح 25 فیصد تک کم ہوئی۔

ماہرین کے مطابق ہمیں غیر یقینی منصوبوں کے ساتھ خود کو خطرے میں ڈالتے ہوئے آگے بڑھنا ہوگا، اور اس کے علاوہ کوئی چارہ نہیں ہے۔

واضح رہے کہ امریکہ میں اب تک کووڈ-19 سے 2 لاکھ 57 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں جبکہ ایک کروڑ 25 لاکھ افراد بیماری سے متاثرہ ہیں۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us