ہفتہ, April 9 Live
Shadow
سرخیاں
افغانستان میں امریکی فوج کی جانب سے تشدد کی تربیت کے لیے بلوچی قیدی کو استعمال کرنے کا انکشافہندوستانی میزائل کا مبینہ غلطی سے پاکستانی حدود میں گرنے کا واقعہ: امریکہ کی طرف سے متعصب جبکہ چین کی جانب سے نصیحت آمیز ردعملمیٹا آسٹریلوی سیاستدانوں کو سائبر حملوں اور جھوٹی خبروں سے بچنے کی تربیت دے گییوکرین: مغربی ممالک سے آئے 180 سے زائد جنگجو ہوائی حملے میں ہلاک، روس کی مغربی ممالک کو تنبیہ، سب نشانے پر ہیں، چُن چُن کر ماریں گےاسرائیل پر تاریخ کا بڑا سائبر حملہ: وزیراعظم، وزارت داخلہ اور وزارت صیہونی بہبود کی ویب سائٹیں ہیک اور تلفروس اور یوکرین کے مابین جلد امن معاہدہ طے پا جائے گا: روسی مذاکرات کاریوکرینی مہاجرین کی تعداد 50 لاکھ سے بڑھ گئی: اقوام متحدہفیس بک اور انسٹاگرام کی شدید متعصب پالیسی کا اعلان: روسی صدر اور فوج کیخلاف نفرت اور موت کے پیغامات شائع کرنے کی اجازت، نتیجتاً مغربی ممالک میں آرتھوڈاکس کلیساؤں اور روسی کاروباروں پر حملوں کی خبریںترکی کا بھی روس کے ساتھ مقامی پیسے میں تجارت کرنے کا اعلانمغرب کے دوہرے معیار: دنیا پر روس سے تجارت پر پابندیاں، برطانیہ سمیت بیشتر مغربی ممالک روس سے گیس و تیل کی خریداری جاری رکھیں گے

سابق صدر ٹرمپ کو آج نہیں تو کل سماجی میڈیا پر واپسی کی سہولت مل جائے گی تاہم تب تک انکا اثرورسوخ ختم ہو چکا ہو گا: بل گیٹس

معروف سافٹ ویئر کمپنی مائیکروسافٹ کے بانی بل گیٹس کا کہنا ہے کہ سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ پر ٹویٹر کی مستقل پابندی درست نہیں اور انہیں سماجی میڈیا پر واپسی کی سہولت دے دینی چاہیے۔

امریکی میڈیا سے ہونے والی گفتگو میں بل گیٹس کا کہنا تھا کہ انہیں لگتا ہے کہ سابق صدر ٹرمپ کو جلد نہیں تو بدیر سماجی میڈیا پر واپسی کی اجازت مل جائے گی، لیکن انکی مقبولیت اور باتوں میں لوگوں کی دلچسپی پہلے جیسی نہیں رہے گی۔

واضح رہے کہ سافٹ ویئر کمپنی کے مالک اور ماضی میں دنیا کے امیر ترین شخص بل گیٹس اکثر صحت، زراعت، بیماریوں کی روک تھام کے اہم موضوعات پر بھی گفتگو کرتے رہتے ہیں، اگرچہ ان کے پاس ان میں سے کسی بھی شعبے میں سند نہیں تاہم انکی امارت اور مغربی لبرل میڈیا میں انکے اثرورسوخ کے باعث انکے تبصروں کو نمایاں جگہ دی جاتی ہے۔ گزشتہ کچھ عرصے سے بل گیٹس کا سیاسی موضوعات پر تبصروں کا سلسلہ بھی چل نکلا ہے جسے روائیتی طور پر کافی اچھالا جاتا ہے۔ گزشتہ انتخابات کے بعد امریکہ کی سیاسی صورتحال پر رائے دہی کرتے ہوئے بل گیٹس نے سابق صدر ٹرمپ کے دھاندلی کے الزامات کو عجیب اور امریکی نظام کے لیے خطرناک قرار دیا تھا۔

یاد رہے کہ صدر ٹرمپ کے خلاف امریکی لبرل سماجی میڈیا کمپنیوں کے اقدامات کی شروعات ٹویٹر نے کی تھی اور اسے تسلسل سے کیا گیا، یہاں تک کہ امریکی تاریخ کے اس واحد صدر پر تشدد کا الزام لگایا گیا جس نے کوئی نئی جنگ شروع نہ کی بلکہ گزشتہ کو بھی بند کرنے پر کام کیا۔

سماجی میڈیا پر قدغن سے اب تک صدر ٹرمپ نے خود بھی عوامی گفتگو سے اجتناب کیا ہوا ہے، اگرچہ سابق صدر ہونے کے ناطے ان کے پاس اسکی طاقت اور سہولت موجود ہے لیکن صدر ٹرمپ خود بھی بہت کم سیاسی معاملات پر گفتگو کر رہے ہیں، انتہائی ضرورت کے وقت بھی انکا دفتر باقائدہ پریس کے لیے اعلامیہ جاری کرتا ہے۔ البتہ ایک بار صدر ٹرمپ نے سماجی میڈیا پر انکے لیے پابندی کے سوال پر کہا تھا کہ انکے بغیر ٹویٹر ایک غیردلچسپ جگہ بن گیا ہے۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us