اتوار, نومبر 28 Live
Shadow
سرخیاں
نائیجیر: فرانسیسی فوج کی فائرنگ سے 2 شہری شہید، 16 زخمیامریکی فوج میں ہر 4 میں سے 1 عورت اور 5 میں سے 1 مرد جنسی زیادتی کا نشانہ بنتا ہے، بیشتر خود کشی کر لیتے، کورٹ مارشل کے خوف سے کوئی آواز نہیں اٹھاتا: سابقہ اہلکارروس کا غیر ملکی سماجی میڈیا کمپنیوں پر ملک میں کاروباری اندراج کے لیے دباؤ جاری: رواں سال کے آخر تک عمل نہ ہونے پر پابندی لگانے کا عندیاامریکہ ہائپر سونک ٹیکنالوجی میں چین اور روس سے بہت پیچھے ہے: امریکی جنرل تھامپسنامریکی تفریحی میڈیا صنعت کس عقیدے، نظریے اور مقصد کے تحت کام کرتی ہے؟چوالیس فیصد امریکی اولاد پیدا کرنے کی خواہش نہیں رکھتے: پیو سروے رپورٹچینی کمپنی ژپینگ نے جدید ترین برقی کار جی-9 متعارف کر دی: بیٹری کے معیار اور رفتار میں ٹیسلا کو بھی پیچھے چھوڑ دیاماحولیاتی تحفظ کی مہم کیوں ناکام ہے؟: کینیڈی پروفیسر نے امیر مغربی ممالک کو زمہ دار ٹھہرا دیااتحادیوں کو اکیلا نہیں چھوڑا جائے گا، تحفظ ہر صورت یقینی بنائیں گے: امریکی وزیردفاعروس اس وقت آزاد دنیا کا قائد ہے: روسی پادری اعظم کا عیسائی گھرانوں کی امریکہ سے روس منتقلی پر تبصرہ

کورونا کے 1٪ مریضوں کے پھیپھڑوں میں سوراخ ہو جاتے ہیں: تحقیق

معائنے میں پتہ چلا ہے کہ کووڈ19 کے ہر 100 میں سے ایک مریض کے پھیپھڑوں میں سوراخ ہو جاتے ہیں۔ جس کے باعث گہری سانس لینے میں دشواری اور سینے میں شدید درد جیسے مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

ڈاکٹروں کو معائنے میں پتہ چلا ہے کہ پھیپھڑوں میں سوراخ کے باعث ہوا پھیپھڑوں اور سینے کی جھلی کے درمیان جھکڑی رہتی ہے اور دباؤ بناتے ہوئے اندرونی اعضاء کو نقصان پہنچاتی ہے۔ جبکہ ایسے افراد جو پہلے سے پھیپھڑوں کے مرض کا شکار ہوں ان کے پھیپھڑوں میں سوراخ کا خدشہ زیادہ ہوتا ہے۔

اب تک کے اعدادو شمار کے مطابق پھپھڑوں میں سوراخ کے بعد دو تہائی مریض صحت یاب ہو جاتے ہیں، جبکہ پھیپھڑوں میں سوراخ کا مسئلہ بھی کووڈ19 کی طرح خواتین کی نسبت مردوں میں زیادہ دیکھا جا رہا ہے۔ اور تیزابی خون والے مریضوں میں اس مسئلے کے خطرات مزید بڑھ جاتے ہیں۔

یاد رہے کہ تحقیق کے نتائج فی الحال صرف برطانوی شہریوں کے معائنے سے اخذ کیے گئے ہیں۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us