اتوار, April 10 Live
Shadow
سرخیاں
افغانستان میں امریکی فوج کی جانب سے تشدد کی تربیت کے لیے بلوچی قیدی کو استعمال کرنے کا انکشافہندوستانی میزائل کا مبینہ غلطی سے پاکستانی حدود میں گرنے کا واقعہ: امریکہ کی طرف سے متعصب جبکہ چین کی جانب سے نصیحت آمیز ردعملمیٹا آسٹریلوی سیاستدانوں کو سائبر حملوں اور جھوٹی خبروں سے بچنے کی تربیت دے گییوکرین: مغربی ممالک سے آئے 180 سے زائد جنگجو ہوائی حملے میں ہلاک، روس کی مغربی ممالک کو تنبیہ، سب نشانے پر ہیں، چُن چُن کر ماریں گےاسرائیل پر تاریخ کا بڑا سائبر حملہ: وزیراعظم، وزارت داخلہ اور وزارت صیہونی بہبود کی ویب سائٹیں ہیک اور تلفروس اور یوکرین کے مابین جلد امن معاہدہ طے پا جائے گا: روسی مذاکرات کاریوکرینی مہاجرین کی تعداد 50 لاکھ سے بڑھ گئی: اقوام متحدہفیس بک اور انسٹاگرام کی شدید متعصب پالیسی کا اعلان: روسی صدر اور فوج کیخلاف نفرت اور موت کے پیغامات شائع کرنے کی اجازت، نتیجتاً مغربی ممالک میں آرتھوڈاکس کلیساؤں اور روسی کاروباروں پر حملوں کی خبریںترکی کا بھی روس کے ساتھ مقامی پیسے میں تجارت کرنے کا اعلانمغرب کے دوہرے معیار: دنیا پر روس سے تجارت پر پابندیاں، برطانیہ سمیت بیشتر مغربی ممالک روس سے گیس و تیل کی خریداری جاری رکھیں گے

روس کی کورونا ویکسین کی تیاری اور کامیاب آزمائش کے بعد 85 صوبوں میں ترسیل کی مشق

روس نے ملک کے 85 صوبوں میں کورونا کی ویکسین کو ہنگامی طورپر پہنچانے کی مشق کی ہے۔ روسی وزیر صحت میخائل موراشکو کا کہنا ہے کہ روس دنیا کی پہلی باقائدہ کامیاب ویکسین بنانے میں کامیاب رہا ہے۔ جس کی عالمی ادارہ میں رجسٹریشن بھی ہو چکی ہے اور دنیا بھر سے 1 ارب سے زائد خوراکوں کی طلب بھی روس کو موصول ہو چکی ہے۔ ویکسین کی آزمائش اپنے آخری مراحل میں ہے۔ ایسے میں ہنگامی بنیادوں پر اسکی ملک کے ہر کونے میں ترسیل کو آزمایا جا رہا ہے۔ اور نمونوں کو ماسکو سے ملک کے تمام 85 صوبوں میں بھیجا جا چکا ہے۔

وزیر صحت کا مزید کہنا تھا کہ ویکسین آزمائش کے آخری مرحلے میں 40 ہزار افراد پر آزمائی جا رہی ہے۔ اور یہ مرحلہ بھی جلد ختم ہو جائے گا۔ ماسکو کی نائب میئر انستاسیا کا کہنا ہے کہ 35 ہزار افراد پر کامیاب آزمائش ہوچکی ہے۔ جلد ویکسین کی پیداوار پر کام شروع ہو جائے گا۔

اس کے علاوہ روس نے موبائل اپلیکیشن بھی تیار کی ہے جس سے شہری ہنگامی طور پر ویکسین اور دیگر ضروری امداد کو فوری طلب کر سکتے ہیں۔

یاد رہے کہ روسی صدر ولادی میر پیوٹن نے 11 آگست کو دنیا کی پہلی کورونا ویکسین تیار کرنے کا دعویٰ کیا تھا، اور اسے باقائدہ عالمی ادارے میں رجسٹرڈ بھی کروا دیا تھا۔ روسی ویکسین کو سپوتنک5 کا نام دی اگیا ہے۔

روسی ویکسین کو ماسکو کے گمالیہ تحقیقی مرکز میں تیار کیا گیا ہے۔ جس کے خلاف شروع میں کچھ مغربی ممالک نے غیر محفوظ ہونے کا پراپیگنڈا کیا تاہم بالآخرتفصیل اور آزمائش کے نتائج سامنے آنے پر تمام اعتراضات واپس لے لیے گئے تھے۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us