ہفتہ, April 9 Live
Shadow
سرخیاں
افغانستان میں امریکی فوج کی جانب سے تشدد کی تربیت کے لیے بلوچی قیدی کو استعمال کرنے کا انکشافہندوستانی میزائل کا مبینہ غلطی سے پاکستانی حدود میں گرنے کا واقعہ: امریکہ کی طرف سے متعصب جبکہ چین کی جانب سے نصیحت آمیز ردعملمیٹا آسٹریلوی سیاستدانوں کو سائبر حملوں اور جھوٹی خبروں سے بچنے کی تربیت دے گییوکرین: مغربی ممالک سے آئے 180 سے زائد جنگجو ہوائی حملے میں ہلاک، روس کی مغربی ممالک کو تنبیہ، سب نشانے پر ہیں، چُن چُن کر ماریں گےاسرائیل پر تاریخ کا بڑا سائبر حملہ: وزیراعظم، وزارت داخلہ اور وزارت صیہونی بہبود کی ویب سائٹیں ہیک اور تلفروس اور یوکرین کے مابین جلد امن معاہدہ طے پا جائے گا: روسی مذاکرات کاریوکرینی مہاجرین کی تعداد 50 لاکھ سے بڑھ گئی: اقوام متحدہفیس بک اور انسٹاگرام کی شدید متعصب پالیسی کا اعلان: روسی صدر اور فوج کیخلاف نفرت اور موت کے پیغامات شائع کرنے کی اجازت، نتیجتاً مغربی ممالک میں آرتھوڈاکس کلیساؤں اور روسی کاروباروں پر حملوں کی خبریںترکی کا بھی روس کے ساتھ مقامی پیسے میں تجارت کرنے کا اعلانمغرب کے دوہرے معیار: دنیا پر روس سے تجارت پر پابندیاں، برطانیہ سمیت بیشتر مغربی ممالک روس سے گیس و تیل کی خریداری جاری رکھیں گے

امریکہ: ریاست وسکونسن کے مخصوص انتخابی حلقوں میں دوبارہ گنتی کے لیے درخواست جمع

صدر ٹرمپ کی انتخابی مہم کی انتظامیہ نے ریاست وسکونسن کے بعض حلقوں میں ووٹوں کی دوبارہ گنتی کے لیے درخواست جمع کروا دی ہے اور اس کے لیے مقررہ 30 لاکھ ڈالر کی ادائیگی بھی کر دی گئی ہے۔ واضح رہے کہ ریاست وسکونسن میں جوبائیڈن کو صدر ٹرمپ پر صرف 20 ہزار ووٹوں کی برتری حاصل ہے۔ امریکی ذرائع ابلاغ کے مطابق دوبارہ گنتی کے لیے درخواست دیے گئے حلقوں میں کل 8 لاکھ ووٹ ڈالے گئے ہیں۔

پوری ریاست میں دوبارہ گنتی کے لیے امیدوار کو 80 لاکھ ڈالر کی بڑی جمع کروانا پڑتے، یہی وجہ تھی کہ صرف مخصوص حلقوں میں دوبارہ گنتی کی درخواست دی گئی ہے، آج اعتراضات کے خلاف درخواست جمع کروانے کا آخری روز تھا۔

صدر ٹرمپ کی انتخابی مہم کی انتظامیہ کی جانب سے درخواست میں اعتراضات اٹھائے گئے ہیں کہ ریاست میں بائیڈن کی فتح کے پیچھے ووٹ نہ ڈالنے والے افراد کے نام سے ووٹوں، غیر قانونی طور پر جاری کردہ بیلٹوں اور مقامی انتظامیہ کی غلط سفارشات کا ہاتھ ہے، اور مشکوک حلقوں میں شدید ترین بدانتظامیوں کی شکایات بھی موجود ہیں۔

جو بائیڈن کو وسکونسن کے تمام 72 حلقوں سے مجموعی طور پر 20 ہزار 612 ووٹوں کی برتری حاصل ہے، جبکہ یہ ان چند ریاستوں میں شامل ہے جہاں صدر ٹرمپ نے اپنی فتح کا اعلان کر رکھا ہے۔

وسکونسن سے جیت جانے کے باوجود صدر ٹرمپ اور جوبائیڈن کے درمیان فرق بہت نمایاں ہو گا، صدر ٹرمپ تاحال میڈیا کی رپورٹوں کے مطابق 222 اور بائیڈن 290 الیکٹورل ووٹ حاصل کر سکے ہیں۔ تاہم اس سے ان کے دھاندلی کے بیانیے کو تقویت ملے گی اور وہ مزید ریاستوں میں دوبارہ گنتی کی درخواست جمع کروا سکتے ہیں۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us