اتوار, مئی 9 Live
Shadow
سرخیاں
چینی راکٹ خلائی اسٹیشن منزل پر کامیابی سے پہنچا کر بحیرہ ہند کی فضاؤں میں جل کر بھسم: آبادی والے علاقے میں گرنے کے مغربی پراپیگنڈے پر چین کا افسوس کا اظہارکابل: اسکول پر راکٹ حملے میں متعدد طالبات سمیت 30 جاں بحق، 50 زخمیروس: دوسری جنگ عظیم میں نازی جرمنی کے خلاف فتح کا جشن، ماسکو میں فوجی پریڈ کا انعقاد – براہ راست ویڈیومالدیپ کے سابق صدر محمد نشید بم حملے میں بال بال بچ گئےبرازیل میں پولیس کے منشیات فروشوں کے خلاف چھاپے جاری: 3 روز میں 1 پولیس افسر سمیت 28 ہلاکعراق: نیٹو افواج کے زیر استعمال ہوائی اڈے پر ڈرون حملہ، کوئی جانی نقصان نہ ہونے کا دعویٰامریکی تیل ترسیل کی سب سے بڑی کمپنی پر سائبر حملہ: ملک بھر میں پہیہ جام ہونے کا خطرہ منڈلانے لگااسرائیل کوئی ریاست نہیں ایک دہشت گرد کیمپ ہے: ایرانی ریاستی سربراہ علی خامنہ ایاطالوی پولیس افسر کے قتل کے جرم میں دو امریکی سیاحوں کو عمر قید کی سزاروس کی ڈالر، یورو اور پاؤنڈ کی بجائے سونے اور چینی یوآن میں سرمایہ کاری کی پالیسی جاری، بڑے اہداف حاصل

سابق امریکی وزیر خارجہ ہیلری کلنٹن کا کرد خواتین جنگجوؤں پر فلم بنانے کا اعلان: متعدد عالمی حلقوں نے مشرق وسطیٰ میں جنگ کی سیاست کو ہوا دینے کی کوشش قرار دے دیا

سابق امریکی وزیر خارجہ ہیلری کلنٹن نے بیٹی کے ساتھ مل کر خواتین کرد جنگجوؤں پر فلم بنانے کا اعلان کیا ہے۔ “کوبانی کی بیٹیاں: بغاوت، ہمت اور انصاف کی کہانی” نامی کتاب کو فلمانے کا فیصلہ بروز پیر سامنے آیا ہے۔

فلم پر شروع ہونے سے قبل ہی متعدد عالمی حلقوں کی جانب سے تنقید کی جا رہی ہے اور اسے ہیلری کی نسوانیت پسندی کے پردے میں مشرق وسطیٰ میں جاری جنگی آگ کو ٹرمپ کے بعد دوبارہ ہوا دینے کی کوشش قرار دیا جا رہا ہے۔ جس سے لسانی تفریق اور علاقائی مسائل میں مزید اضافہ ہو گا۔

کوبانی کی بیٹیاں کی کہانی ایسی لڑکیوں کے گرد گھومتی ہے جو امریکی مدد سے شام میں داعش کے خلاف لڑتی ہیں، لیکن حقیقت میں اس میں امریکی مدد کو بطور تحفہ اور خطے کا خیر خواہ دکھایا گیا ہے۔ فلم کا اعلان کرتے ہیلری کلنٹن کا کہنا تھا کہ یہ ایسی لڑکیوں کی کہانی ہے جو انصاف اور برابری کے حقوق کے لیے لڑتی ہیں۔

یاد رہے کہ ہیلری کلنٹن کے کرد باغیوں کے ساتھ دیرینہ تعلقات ہیں جن میں خصوصاً وائی پی جی اور پی کے کے نمایاں ہیں جنہیں ترکی اور امریکہ سمیت کئی ممالک میں دہشت گرد تنظیم مانا جاتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ اوباما کے دور حکومت میں ہیلری کرد ملیشیا کو داعش کے خلاف ہتھیار دینے کی بڑی حمائتی تھیں، اور مختلف ذرائع کے مطابق اب یہی گروہ شام میں امریکی مفادات اور متعدد تیل کے ذرائع کی حفاظت پر مامور ہیں۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us