ہفتہ, April 9 Live
Shadow
سرخیاں
افغانستان میں امریکی فوج کی جانب سے تشدد کی تربیت کے لیے بلوچی قیدی کو استعمال کرنے کا انکشافہندوستانی میزائل کا مبینہ غلطی سے پاکستانی حدود میں گرنے کا واقعہ: امریکہ کی طرف سے متعصب جبکہ چین کی جانب سے نصیحت آمیز ردعملمیٹا آسٹریلوی سیاستدانوں کو سائبر حملوں اور جھوٹی خبروں سے بچنے کی تربیت دے گییوکرین: مغربی ممالک سے آئے 180 سے زائد جنگجو ہوائی حملے میں ہلاک، روس کی مغربی ممالک کو تنبیہ، سب نشانے پر ہیں، چُن چُن کر ماریں گےاسرائیل پر تاریخ کا بڑا سائبر حملہ: وزیراعظم، وزارت داخلہ اور وزارت صیہونی بہبود کی ویب سائٹیں ہیک اور تلفروس اور یوکرین کے مابین جلد امن معاہدہ طے پا جائے گا: روسی مذاکرات کاریوکرینی مہاجرین کی تعداد 50 لاکھ سے بڑھ گئی: اقوام متحدہفیس بک اور انسٹاگرام کی شدید متعصب پالیسی کا اعلان: روسی صدر اور فوج کیخلاف نفرت اور موت کے پیغامات شائع کرنے کی اجازت، نتیجتاً مغربی ممالک میں آرتھوڈاکس کلیساؤں اور روسی کاروباروں پر حملوں کی خبریںترکی کا بھی روس کے ساتھ مقامی پیسے میں تجارت کرنے کا اعلانمغرب کے دوہرے معیار: دنیا پر روس سے تجارت پر پابندیاں، برطانیہ سمیت بیشتر مغربی ممالک روس سے گیس و تیل کی خریداری جاری رکھیں گے

فیس بک نے کووڈ-19 کا علاج تجویز کرنے پر وینزویلا کے صدر کا کھاتہ ایک ماہ کے لیے منجمند کر دیا

فیس بک کی غیرلبرل سیاسی رہنماؤں کی آواز دبانے کی متعصب پالیسی جاری ہے، امریکی ابلاغی ٹیکنالوجی کمپنی کا نیا شکار وینزویلا کے صدر نیکولس مادورو بنے ہیں، جن کے کھاتے کو فیس بک نے 1 ماہ کے لیے کسی بھی قسم کی اشاعت سے روک دیا ہے۔

وینزویلا کے صدر کا فیس بک کھاتہ کورونا وباء کے خلاف ایک ممکنہ علاج تجویز کرنے پر عارضی طور پر منجمند کیا گیا ہے۔ صدر مادورو نے کارواتیویر نامی ایک جڑی بوٹی کو کووڈ-19 کے خلاف مؤثر تجویز کیا تھا۔ جسے فیس بک نے فوری تلف کر دیا اور صدر کا فیس بک کھاتہ ایک ماہ کے لیے منجمند کر دیا۔ فیس بک کا مؤقف ہے کہ صدر مادورو نے غلط معلومات شائع کیں۔

فیس بک نے اپنی وضاحت میں مزید کہا ہے کہ وہ عالمی ادارہ صحت کی تجاویز کے علاوہ کسی کو درست نہیں مانتے، اور عالمی ادارے نے تاحال کوئی علاج تجویز نہیں کیا ہے۔ لہٰذا غلط معلومات شائع کرنے پر صدر مادورو کا کھاتہ ایک ماہ تک کسی قسم کا مواد شائع نہیں کر سکے گا۔

وینزویلا نے تاحال فیس بک کے اقدام پر کوئی ردعمل نہیں دیا ہے۔

یاد رہے کہ صدر مادورو نے کارواتیویر کی تشہیر پہلی بار نہیں کی ہے، وہ اس سے قبل بھی اسے کووڈ-19 کے خلاف معجزاتی قطرہ کہہ چکے ہیں۔ جس پر فیس بک نے انکی ویڈیو کو تلف کر دیا تھا، البتہ تب انکا کھاتہ بند نہیں کیا تھا۔ صدر مادورو کا ماننا ہے کہ کارواتیویر ہومیوپیتھی کا تجویز کردہ اور آزمودہ علاج ہے۔ ہر چار گھنٹے بعد اس کے دس قطرے لینے سے کووڈ-19 وائرس انسان کو متاثر نہیں کر پاتا۔ صدر نے اسکے وینزویلا میں آزمائش اور مصدقہ ہونے کا دعویٰ بھی کیا تھا۔ تاہم ایلوپیتھی طریقہ علاج اسے ماننے سے انکاری ہے۔

یاد رہے کہ صدر مادورو رواں ماہ کے شروع میں روسی ویکسین سپوتنک5 بھی لگوا چکے ہیں۔

وینزویلا جنوبی امریکہ کے کم ترین متاثرہ ممالک میں سے ہے، جہاں اب تک صرف ایک لاکھ 55 ہزار افراد میں کووڈ-19 وائرس کی تصدیق ہوئی ہے، اور صرف 1500 افراد کی موت واقع ہوئی ہے۔ اس کے برعکس ہمسایہ برازیل میں سوا کروڑ افراد کے متاثر اور 3 لاکھ کی موت کی تصدیق ہوئی ہے۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us