پیر, جون 14 Live
Shadow
سرخیاں
ترکی: 20 ٹن سونا اور 5 ٹن چاندی کا نیا ذخیرہ دریافت، ملکی سالانہ پیداوار 42 ٹن کا درجہ پار کر گئی، 5 برسوں میں 100 ٹن تک لے جانے کا ارادہحکومت پنجاب کا ویکسین نہ لگوانے والوں کے موبائل سم کارڈ معطل کرنے کی پالیسی لانے کا فیصلہموساد کے سابق سربراہ کا ایرانی جوہری سائنسدان اور مرکز پر سائبر حملے کا اعترافی اشارہ: ایرانی سائنسدانوں کو منصوبہ چھوڑنے پر معاونت کی پیشکش کر دییورپی اشرافیہ و ابلاغی اداروں کے برعکس شہریوں کی نمایاں تعداد نے روس کو اہم تہذیبی شراکت دار و اتحادی قرار دے دیاروسی بحریہ نے سٹیلتھ ٹیکنالوجی سے لیس جدید ترین بحری جہاز کا مکمل نمونہ تیار کر لیا: مکمل جہاز آئندہ سال فوج کے حوالے کر دیا جائےگاٹویٹر کو نائیجیریا میں دوبارہ بحالی کیلئے مقامی ابلاغی اداروں کی طرح لائسنس لینا ہو گا، اندراج کروانا ہو گا: افریقی ملک کا امریکی سماجی میڈیا کمپنی کو دو ٹوک جواب، صدر ٹرمپ کی جانب سے پابندی پر ستائش کا بیانکاراباخ آزادی جنگ: جنگی قیدی چھڑوانے کے لیے آرمینی وزیراعظم کی آزربائیجان کو بیٹے کی حوالگی کی پیشکشمجھ پر حملے سائنس پر حملے ہیں: متنازعہ امریکی مشیر صحت ڈاکٹر فاؤچی کا اپنے دفاع میں نیا متنازعہ بیان، وباء سے شدید متاثر امریکیوں کے غصے میں مزید اضافہچین 3 سال کے بچوں کو بھی کووڈ-19 ویکسین لگانے والا دنیا کا پہلا ملک بن گیاایرانی رویہ جوہری معاہدے کی بحالی میں تعطل کا باعث بن سکتا ہے: امریکی وزیر خارجہ بلنکن

اطالوی پولیس افسر کے قتل کے جرم میں دو امریکی سیاحوں کو عمر قید کی سزا

اطالوی عدالت نے پولیس افسر کو قتل کرنے کے جرم میں دو امریکی شہریوں کو عمر قید کی سزا سنا دی ہے۔ 2019 کی گرمی کی چھٹیوں میں روم آنے والے دو امریکی سیاحوں کے خلاف منشیات خریدتے ہوئے پولیس اہلکار کو قتل کرنے کا مقدمہ قائم تھا، جس کے دفاع میں سیاحوں کا کہنا تھا کہ انہوں نے پولیس اہلکار کو چاقو کے وار سے اپنے دفاع میں مارا۔

بیس سالہ لی اور اکیس سالہ جبرائیل کے خلاف مقدمے کی سماعت تقریباً 2 سال جاری رہی، جس کے بعد عدالت نے استغاثہ کا ساتھ دیتے ہوئے دونوں مجمرموں کو عمر قید کی سزا سنائی ہے۔

پولیس کا دعویٰ تھا کہ جولائی 2019 میں روم میں دونوں امریکی نوجوانوں نے کوکین خریدنے کی کوشش کی، لیکن جب ڈیلر نے کوکین کی بجائے ان کو دیگر نشہ آور گولیاں فروخت کیں تو وہ دونوں اس کا بیگ اڑا لے گئے۔ بعد میں ہتھیائے بیگ کے بدلے اپنے پیسے وصول کرنے کی غرض سے ملاقات کا وقت طے کیا، لیکن بیوپاری کے بجائے عام لباس میں پولیس نے ملزمان کو گھیر لیا۔

مارچ میں عدالت کے سامنے گواہی دیتے ہوئے ایک مجرم نے بتایا کہ یہ دو افراد عام لباس میں تھے اور انہوں نے پولیس کی حیثیت سے اپنی شناخت نہیں کروائی تھی۔ اس نے یہ بھی دعویٰ کیا کہ دونوں نے فوری طور پر ان پر حملہ کردیا۔ جس سے وہ گھبرا گیا اور مجھے لگا کہ وہ مجھے قتل کرنا چاہتے ہیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ 35 سالہ حال ہی میں بیاہے آفیسر کو7 انچ لمبے بلیڈ والے چاقو سے 11 بارنشانہ بنایا گیا، حملہ دفاع میں نہیں اردتاً کیا گیا۔

مقتول کے ساتھی افسر نے گواہی دی کہ دونوں اہلکاروں نے اپنے پولیس کے شناختی کارڈ دکھائے تھے۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us