ہفتہ, April 9 Live
Shadow
سرخیاں
افغانستان میں امریکی فوج کی جانب سے تشدد کی تربیت کے لیے بلوچی قیدی کو استعمال کرنے کا انکشافہندوستانی میزائل کا مبینہ غلطی سے پاکستانی حدود میں گرنے کا واقعہ: امریکہ کی طرف سے متعصب جبکہ چین کی جانب سے نصیحت آمیز ردعملمیٹا آسٹریلوی سیاستدانوں کو سائبر حملوں اور جھوٹی خبروں سے بچنے کی تربیت دے گییوکرین: مغربی ممالک سے آئے 180 سے زائد جنگجو ہوائی حملے میں ہلاک، روس کی مغربی ممالک کو تنبیہ، سب نشانے پر ہیں، چُن چُن کر ماریں گےاسرائیل پر تاریخ کا بڑا سائبر حملہ: وزیراعظم، وزارت داخلہ اور وزارت صیہونی بہبود کی ویب سائٹیں ہیک اور تلفروس اور یوکرین کے مابین جلد امن معاہدہ طے پا جائے گا: روسی مذاکرات کاریوکرینی مہاجرین کی تعداد 50 لاکھ سے بڑھ گئی: اقوام متحدہفیس بک اور انسٹاگرام کی شدید متعصب پالیسی کا اعلان: روسی صدر اور فوج کیخلاف نفرت اور موت کے پیغامات شائع کرنے کی اجازت، نتیجتاً مغربی ممالک میں آرتھوڈاکس کلیساؤں اور روسی کاروباروں پر حملوں کی خبریںترکی کا بھی روس کے ساتھ مقامی پیسے میں تجارت کرنے کا اعلانمغرب کے دوہرے معیار: دنیا پر روس سے تجارت پر پابندیاں، برطانیہ سمیت بیشتر مغربی ممالک روس سے گیس و تیل کی خریداری جاری رکھیں گے

اطالوی پولیس افسر کے قتل کے جرم میں دو امریکی سیاحوں کو عمر قید کی سزا

اطالوی عدالت نے پولیس افسر کو قتل کرنے کے جرم میں دو امریکی شہریوں کو عمر قید کی سزا سنا دی ہے۔ 2019 کی گرمی کی چھٹیوں میں روم آنے والے دو امریکی سیاحوں کے خلاف منشیات خریدتے ہوئے پولیس اہلکار کو قتل کرنے کا مقدمہ قائم تھا، جس کے دفاع میں سیاحوں کا کہنا تھا کہ انہوں نے پولیس اہلکار کو چاقو کے وار سے اپنے دفاع میں مارا۔

بیس سالہ لی اور اکیس سالہ جبرائیل کے خلاف مقدمے کی سماعت تقریباً 2 سال جاری رہی، جس کے بعد عدالت نے استغاثہ کا ساتھ دیتے ہوئے دونوں مجمرموں کو عمر قید کی سزا سنائی ہے۔

پولیس کا دعویٰ تھا کہ جولائی 2019 میں روم میں دونوں امریکی نوجوانوں نے کوکین خریدنے کی کوشش کی، لیکن جب ڈیلر نے کوکین کی بجائے ان کو دیگر نشہ آور گولیاں فروخت کیں تو وہ دونوں اس کا بیگ اڑا لے گئے۔ بعد میں ہتھیائے بیگ کے بدلے اپنے پیسے وصول کرنے کی غرض سے ملاقات کا وقت طے کیا، لیکن بیوپاری کے بجائے عام لباس میں پولیس نے ملزمان کو گھیر لیا۔

مارچ میں عدالت کے سامنے گواہی دیتے ہوئے ایک مجرم نے بتایا کہ یہ دو افراد عام لباس میں تھے اور انہوں نے پولیس کی حیثیت سے اپنی شناخت نہیں کروائی تھی۔ اس نے یہ بھی دعویٰ کیا کہ دونوں نے فوری طور پر ان پر حملہ کردیا۔ جس سے وہ گھبرا گیا اور مجھے لگا کہ وہ مجھے قتل کرنا چاہتے ہیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ 35 سالہ حال ہی میں بیاہے آفیسر کو7 انچ لمبے بلیڈ والے چاقو سے 11 بارنشانہ بنایا گیا، حملہ دفاع میں نہیں اردتاً کیا گیا۔

مقتول کے ساتھی افسر نے گواہی دی کہ دونوں اہلکاروں نے اپنے پولیس کے شناختی کارڈ دکھائے تھے۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us