ہفتہ, April 9 Live
Shadow
سرخیاں
افغانستان میں امریکی فوج کی جانب سے تشدد کی تربیت کے لیے بلوچی قیدی کو استعمال کرنے کا انکشافہندوستانی میزائل کا مبینہ غلطی سے پاکستانی حدود میں گرنے کا واقعہ: امریکہ کی طرف سے متعصب جبکہ چین کی جانب سے نصیحت آمیز ردعملمیٹا آسٹریلوی سیاستدانوں کو سائبر حملوں اور جھوٹی خبروں سے بچنے کی تربیت دے گییوکرین: مغربی ممالک سے آئے 180 سے زائد جنگجو ہوائی حملے میں ہلاک، روس کی مغربی ممالک کو تنبیہ، سب نشانے پر ہیں، چُن چُن کر ماریں گےاسرائیل پر تاریخ کا بڑا سائبر حملہ: وزیراعظم، وزارت داخلہ اور وزارت صیہونی بہبود کی ویب سائٹیں ہیک اور تلفروس اور یوکرین کے مابین جلد امن معاہدہ طے پا جائے گا: روسی مذاکرات کاریوکرینی مہاجرین کی تعداد 50 لاکھ سے بڑھ گئی: اقوام متحدہفیس بک اور انسٹاگرام کی شدید متعصب پالیسی کا اعلان: روسی صدر اور فوج کیخلاف نفرت اور موت کے پیغامات شائع کرنے کی اجازت، نتیجتاً مغربی ممالک میں آرتھوڈاکس کلیساؤں اور روسی کاروباروں پر حملوں کی خبریںترکی کا بھی روس کے ساتھ مقامی پیسے میں تجارت کرنے کا اعلانمغرب کے دوہرے معیار: دنیا پر روس سے تجارت پر پابندیاں، برطانیہ سمیت بیشتر مغربی ممالک روس سے گیس و تیل کی خریداری جاری رکھیں گے

کورونا وائرس جینیاتی تبدیلی سے مزید خطرناک صورتحال پیدا کر رہا، اس کے خلاف عالمی جنگ میں روس اور چین کی ویکسین کو شامل کر کے فوری حکمت عملی بنانا ہو گی: صدر میخرون کا عالمی کانفرنس میں زور

فرانسیسی صدر ایمینیؤل میخرون نے کورونا وباء سے لڑنے کے لیے دنیا کو مشترکہ حکمت عملی بنانے پر زور دیا ہے۔ صدر میخرون کا کہنا تھا کہ ہمیں روس اور چین کی ویکسینوں کو بھی استعمال کرتے ہوئے فوری وباء سے جان چھڑانے پہ کام کرنا ہو گا ورنہ وائرس انتہائی تیزی سے خود کو بدل رہا اور حاضر ویکسین اس پر جلد بے اثر ہو جائے گی۔

یورپی ملک کے صدر کا مزید کہنا تھا کہ عالمی ادارہ صحت کی کووڈ-19 سے لڑنے کے لیے دنیا بھر میں مساوی سطح پر طبی آلات کی دستیابی کو یقینی بنانا ہو گا، تاکہ وباء سے نمٹنے میں آسانی ہو سکے۔

ریاستی نمائندگان کی کانفرنس سے خطاب میں صدر میخرون نے بار بار زور دیا کہ وباء سے لڑنے کے لیے مشترکہ عالمی حکمت عملی بنانا ہو گی، معاشی طور پر غریب ممالک کو بھی ویکسین کی فوری دستیابی کے بغیر وائرس کو ختم نہیں کیا جا سکے گا، وائرس تیزی سے جینیاتی تبدیلی کر رہا ہے اور پہلے سے بھی خطرناک قسم کے ساتھ حملہ آور ہو رہا ہے۔

صدر میخرون نے کورونا وائرس کے خلاف جدوجہد کو عالمی جنگ قرار دیا۔

کانفرنس سے خطاب میں لبرل صدر نے امریکی صدر جوبائیڈن کے عالمی ادارہ صحت میں واپسی کے فیصلے کو سراہا اور کہا کہ صدر ٹرمپ نے عالمی ادارہ صحت سے علیحدگی اختیار کر کے عالمی جدوجہد کو نقصان پہنچایا تھا۔

رواں ہفتے کے آغاز میں ہونے والی عالمی کانفرنس میں دنیا بھر سے ریاستی نمائندگان نے شرکت کی جن میں جرمنی کی چانسلر اینجیلا میرکل بھی شامل تھیں۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us