ہفتہ, April 9 Live
Shadow
سرخیاں
افغانستان میں امریکی فوج کی جانب سے تشدد کی تربیت کے لیے بلوچی قیدی کو استعمال کرنے کا انکشافہندوستانی میزائل کا مبینہ غلطی سے پاکستانی حدود میں گرنے کا واقعہ: امریکہ کی طرف سے متعصب جبکہ چین کی جانب سے نصیحت آمیز ردعملمیٹا آسٹریلوی سیاستدانوں کو سائبر حملوں اور جھوٹی خبروں سے بچنے کی تربیت دے گییوکرین: مغربی ممالک سے آئے 180 سے زائد جنگجو ہوائی حملے میں ہلاک، روس کی مغربی ممالک کو تنبیہ، سب نشانے پر ہیں، چُن چُن کر ماریں گےاسرائیل پر تاریخ کا بڑا سائبر حملہ: وزیراعظم، وزارت داخلہ اور وزارت صیہونی بہبود کی ویب سائٹیں ہیک اور تلفروس اور یوکرین کے مابین جلد امن معاہدہ طے پا جائے گا: روسی مذاکرات کاریوکرینی مہاجرین کی تعداد 50 لاکھ سے بڑھ گئی: اقوام متحدہفیس بک اور انسٹاگرام کی شدید متعصب پالیسی کا اعلان: روسی صدر اور فوج کیخلاف نفرت اور موت کے پیغامات شائع کرنے کی اجازت، نتیجتاً مغربی ممالک میں آرتھوڈاکس کلیساؤں اور روسی کاروباروں پر حملوں کی خبریںترکی کا بھی روس کے ساتھ مقامی پیسے میں تجارت کرنے کا اعلانمغرب کے دوہرے معیار: دنیا پر روس سے تجارت پر پابندیاں، برطانیہ سمیت بیشتر مغربی ممالک روس سے گیس و تیل کی خریداری جاری رکھیں گے

بٹ کوئن کے موجد کا نام سامنے آنا خطرے سے خالی نہیں، امریکی کرپٹو کرنسی کوئن بیس کا ‘ناکاموتو’ کا نام سامنے آنے پر کرپٹو کرنسی کے مستقبل پر تحفظات کا اظہار

کرپٹو کرنسی بٹ کوئن کے موجد کا نام سامنے آنے پر امریکی کرپٹو کرنسی کوئن بیس کی جانب سے شدید تحفظات کا اظہار کیا گیا ہے۔ امریکی کرپٹو کرنسی کوئن بیس نے ملکی سکیورٹی ایجنسی کمیشن میں درخواست دیتے مؤقف اپنایا ہے کہ بٹ کوئن کے موجد کا نام سامنے آنا کرپٹو کرنسی کے مستقبل کے لیے انتہائی خطرناک ہے۔ یاد رہے کہ بٹ کوئن کے موجد کا تعارف بطور ستوشی ناکاموتو کیا جا رہا ہے، جس پر معاشی و ڈیجیٹل سکیورٹی کے ماہرین نے بھی اسے خطرناک قرار دیا ہے۔

کہا جاتا ہے کہ ناکاموتو اکیلے بھی بٹ کوئن کے مالک ہو سکتے ہیں اور ان کے ساتھ دوستوں کا گروہ بھی منصوبے میں شامل ہو سکتا ہے۔

امریکی سکیورٹی ایجنسی کے اہلکاروں کا کہنا ہے کہ موجد کا عیاں ہو جانا بٹ کوئن کے علاوہ کرپٹو کرنسی کے مستقبل لیے خود ایک بڑا خطرہ ہے، جبکہ نام عیاں ہونے سے بٹ کوئن کی قدر میں کمی بھی واقع ہو سکتی ہے۔

مانا جاتا ہے کہ بٹ کوئن کا موجد یا اسکے ساتھیوں کا گروہ 1 اعشاریہ 1 ملین بٹ کوئن کے مالک ہیں، جو بٹ کوئن کی مجموعی مقدار کا 5٪ ہیں۔ یوں بٹ کوئن کی حالیہ قدر کے مطابق ناکاموتو 50 ارب ڈالر کے مالک ہیں، یعنی وہ چینی آن لائن سٹور علی بابا کے مالک جیک ما کے متوازی دنیا کے امیر ترین شخص ہیں۔

واضح رہے کہ ناکاموتو نے 2008 میں بٹ کوئن کے بارے میں “A Peer-to-peer Electronic Cash System” مقالہ تحریر کیا تھا، جس کے باعث ان کی شناخت کو تب سے مشکوک سمجھا جا رہا ہے، تاہم ناکاموتو کے بارے میں اب بھی عوامی سطح پر بہت کم معلومات موجود ہیں۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us