ہفتہ, April 9 Live
Shadow
سرخیاں
افغانستان میں امریکی فوج کی جانب سے تشدد کی تربیت کے لیے بلوچی قیدی کو استعمال کرنے کا انکشافہندوستانی میزائل کا مبینہ غلطی سے پاکستانی حدود میں گرنے کا واقعہ: امریکہ کی طرف سے متعصب جبکہ چین کی جانب سے نصیحت آمیز ردعملمیٹا آسٹریلوی سیاستدانوں کو سائبر حملوں اور جھوٹی خبروں سے بچنے کی تربیت دے گییوکرین: مغربی ممالک سے آئے 180 سے زائد جنگجو ہوائی حملے میں ہلاک، روس کی مغربی ممالک کو تنبیہ، سب نشانے پر ہیں، چُن چُن کر ماریں گےاسرائیل پر تاریخ کا بڑا سائبر حملہ: وزیراعظم، وزارت داخلہ اور وزارت صیہونی بہبود کی ویب سائٹیں ہیک اور تلفروس اور یوکرین کے مابین جلد امن معاہدہ طے پا جائے گا: روسی مذاکرات کاریوکرینی مہاجرین کی تعداد 50 لاکھ سے بڑھ گئی: اقوام متحدہفیس بک اور انسٹاگرام کی شدید متعصب پالیسی کا اعلان: روسی صدر اور فوج کیخلاف نفرت اور موت کے پیغامات شائع کرنے کی اجازت، نتیجتاً مغربی ممالک میں آرتھوڈاکس کلیساؤں اور روسی کاروباروں پر حملوں کی خبریںترکی کا بھی روس کے ساتھ مقامی پیسے میں تجارت کرنے کا اعلانمغرب کے دوہرے معیار: دنیا پر روس سے تجارت پر پابندیاں، برطانیہ سمیت بیشتر مغربی ممالک روس سے گیس و تیل کی خریداری جاری رکھیں گے

ہمارا مقصد ٹرمپ کو نکالنا تھا، ہم کامیاب رہے: سی این این عہدے دار کا صدر ٹرمپ کے خلاف پراپیگنڈے کی مہم کا اعتراف – ویڈیو عیاں

معروف امریکی یو ٹیوب چینل ویریٹاس نے سی این این ڈائیریکٹر چارلی چیسٹر کی ویڈیو نشر کی ہے جس میں معروف ٹی وی چینل کے اعلیٰ عہدے دار سابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف باقائدہ پراپیگنڈا مہم چلانے کا اعتراف کرتے دیکھے جا سکتے ہیں۔ ویڈیو میں چارلی بے باکی سے اعتراف کرتے ہیں کہ صدر ٹرمپ کو سرائے ابیض سے ہٹانے میں سی این این کا ہی کردار تھا۔

چارلی نے انکشاف کیا ہے کہ کیسے سی این این نے ٹرمپ کے بیمار ہونے کی مہم چلائی، اور جوبائیڈن کو تندرست اور توانا دکھایا۔ جس کا مقصد عام شہریوں کو یہ باور کروانا تھا کہ ٹرمپ صدارت کے لیے موضوع نہیں۔

چیسٹر کا کہنا ہے کہ ہم نے ڈاکٹروں کو سکرین پر دکھایا جو ٹرمپ کے بارے میں افواہیں پھیلانے میں ہماری مدد کرتے، اور حتیٰ کہ صدر کے بیمار ہونے کا ذمہ دار بھی انہی کو ٹھہراتے، جیسے کہ صدر کی ہاتھ ملانے کی عادت پر باقائدہ رپورٹیں بنائی گئیں، جن میں ڈاکٹر کئی منٹوں تک عوام میں صدر کی نفسیاتی صحت سے متعلق شبہات پیدا کرتے۔ ہم نے ایسی خبریں چلائی، جنہیں ہم خود پیدا کرتے اور پھر انکی خوب تشہیر کرتے، چیسٹر نے سی این این کی ایک خبر کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ دو دن تو برائن سٹیلٹر کی وہ خبر چلائی گئی جس میں صحافیوں کو ٹرمپ کی صحت سے متعلق خبر نکالنے پر ابھارا گیا۔

ویڈیو میں چیسٹر بتاتے ہیں کہ صدر ٹرمپ کے خلاف مہم کے برعکس جوبائیڈن سے متعلق خوب اچھی تشہیری مہم چلائی گئی، سی این این پر جوبائیڈن کو ہمیشہ دوڑ لگاتے، صحت کا خیال رکھتے، اور متحرک دکھایا گیا جس سے عوام میں انکی عمر اور صحت سے متعلق دھوکہ پیدا کیا گیا۔

چارلی چیسٹر کو ویڈیو میں واضح طور پر کہتے سنا جا سکتا ہے کہ؛ “دیکھو ہم نے کیا کیا، ہم (سی این این) نے ٹرمپ کو نکال باہر کیا، مجھے 100٪ یقین ہے کہ اگر سی این این یہ ساری مہم نہ چلاتا تو ٹرمپ کبھی بھی انتخابات نہ ہارتا، میں اسی لیے سی این این میں آیا کیونکہ میں اس سارے کھیل کا حصہ بننا چاہتا تھا۔

چیسٹر کا کہنا ہے کہ صحت سے متعلق بیانیہ مظبوط کرنے کے بعد ماحولیاتی مسئلے کو پکڑا گیا، اور صدر ٹرمپ کا نام لیے بغیر عوام میں ماحولیاتی مسائل پر آگاہی کی مہم شرو ع کردی گئی، ایسی ویڈیو نشر کی گئیں جن میں ماحولیاتی مسائل کو خوف کی علامت بنا دیا گیا، حتیٰ کہ معیشت کو بھی ماحولیاتی مسائل سے لاحق خطرات کا جھوٹ نشر کیا گیا۔ پگھلتی برف سے شہروں کو ڈوبتے اور امریکہ میں صحرائی گرمی کی ویڈیو نشر کی گئیں۔

چیسٹر نے انکشاف کیا کہ صدر ٹرمپ کے خلاف چلنے والی ساری مہم کی زمہ داری جیف زوکر کو دی گئی تھی۔

سی این این نے تاحال ان تمام انکشافات پر کوئی ردعمل نہیں دیا۔ البتہ ویڈیو کو صدر ٹرمپ کے حامیوں نے خوب اٹھایا ہے، انکا کہنا ہے کہ وہ پہلے ہی سی این این کے متعصب کردار سے واقف تھے، لیکن انکشافات سے عام عوام کو لبرل سیاست سے متعلق بہتر آگاہی حاصل ہو گی۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us