Shadow
سرخیاں
مغربی طرز کی ترقی اور لبرل نظریے نے دنیا کو افراتفری، جنگوں اور بےامنی کے سوا کچھ نہیں دیا، رواں سال دنیا سے اس نظریے کا خاتمہ ہو جائے گا: ہنگری وزیراعظمامریکی جامعات میں صیہونی مظالم کے خلاف مظاہروں میں تیزی، سینکڑوں طلبہ، طالبات و پروفیسران جیل میں بندپولینڈ: یوکرینی گندم کی درآمد پر کسانوں کا احتجاج، سرحد بند کر دیخود کشی کے لیے آن لائن سہولت، بین الاقوامی نیٹ ورک ملوث، صرف برطانیہ میں 130 افراد کی موت، چشم کشا انکشافاتپوپ فرانسس کی یک صنف سماج کے نظریہ پر سخت تنقید، دور جدید کا بدترین نظریہ قرار دے دیاصدر ایردوعان کا اقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں رنگ برنگے بینروں پر اعتراض، ہم جنس پرستی سے مشابہہ قرار دے دیا، معاملہ سیکرٹری جنرل کے سامنے اٹھانے کا عندیامغرب روس کو شکست دینے کے خبط میں مبتلا ہے، یہ ان کے خود کے لیے بھی خطرناک ہے: جنرل اسمبلی اجلاس میں سرگئی لاوروو کا خطاباروناچل پردیش: 3 کھلاڑی چین اور ہندوستان کے مابین متنازعہ علاقے کی سیاست کا نشانہ بن گئے، ایشیائی کھیلوں کے مقابلے میں شامل نہ ہو سکےایشیا میں امن و استحکام کے لیے چین کا ایک اور بڑا قدم: شام کے ساتھ تذویراتی تعلقات کا اعلانامریکی تاریخ کی سب سے بڑی خفیہ و حساس دستاویزات کی چوری: انوکھے طریقے پر ادارے سر پکڑ کر بیٹھ گئے

کولمبیا میں ٹیکس اصلاحات کے خلاف مظاہرے جاری: تشدد اور جھڑپوں میں 1 پولیس افسر سمیت 19 افراد جاں بحق، جمہوریت کے علمبردار امریکہ کی خاموشی پر چہ مگوئیاں

کولمبیا میں مجوزہ ٹیکس اصلاحات کے خلاف شدید مظاہرے جاری ہیں۔ گزشتہ روز مظاہرین کو مشتعل کرنے کے لیے پولیس نے گولی چلا دی جس کے نتیجے میں ایک اور نوجوان سر پر گولی لگنے سے جاں بحق ہو گیا ہے۔

حکومت نے ایک سیاسی جماعت کے کارکن کی ہلاکت کے بعد متنازعہ بل کو فوری واپس لے لیا ہے تاہم مظاہرین اب حکومت کی برطرفی کا مطالبہ کر رہے ہیں۔

نوجوان کی بے جا موت کے باعث شہری انتہائی نالاں ہیں اور اب مظاہرے تشدد کی شکل اختیار کر گئے ہیں۔ مظاہرے اب دارالحکومت سے نکل کر ملک کے طول و عرض میں پھیل گئے ہیں اور حکومت کے لیے حالات سنبھالنا مشکل ہو رہا ہے۔

یاد رہے کہ مظاہروں میں اب تک ایک پولیس اہلکار سمیت 19 افراد ہلاک ہوگئے ہیں، جبکہ 800 سے زائد افراد کے زخمی ہونے کی بھی اطلاعات ہیں۔

 ایک ویڈیو فوٹیج  انٹرنیٹ پر گردش کررہی ہے جس میں گذشتہ ہفتہ کے دوران مظاہرین کے خلاف جھڑپوں میں پولیس تشدد کا مظاہرہ کرتے ہوئے دیکھائی گئی ہے، ویڈیو میں ایک شخص کو جھڑپ کے دوران پولیس افسروں نے گولی مار کر ہلاک کردیا۔ حکومت نے بدامنی پر قابو پانے کے لئے کچھ علاقوں میں فوج کو بھی تعینات کر دیا ہے۔

وزیر خزانہ البرٹو کیراسکوئلا نے پیر کے روز اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے، عوامی رائے کے مطابق ٹیکس اصلاحات کے نام پر شہریوں اور کاروباروں پر نئے ٹیکسوں کے علاوہ اشیائے خوردونوش پر بھی ٹیکس بڑھانے کا منصوبہ وزیر خزانہ کا ہی تھا۔

دوسری طرف عالمی سطح پر چہ مگوئیاں ہو رہی ہیں کہ امریکہ عالمی سطح پر مظاہروں پر حکومتی تشدد کی ہمیشہ مذمت کرتا رہا ہے لیکن کولمبیا میں امریکی حمایت یافتہ حکومت کی پوری سرپرستی کی جا رہی ہے اور 19 افراد کی ہلاکت کے باوجود صدر بائیڈن نے اب تک مداخلت تو دور کوئی بیان بھی جاری نہیں کیا۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

18 + twelve =

Contact Us