پیر, اکتوبر 25 Live
Shadow
سرخیاں
ترک صدر ایردوعان کا اندرونی سیاست میں مداخلت پر 10 مغربی ممالک کے سفراء کو ناپسندیدہ قرار دینے کا فیصلہبحرالکاہل میں چینی و روسی جنگی بحری مشقیں مکمل – ویڈیونائجیریا: جیل حملے میں 800 قیدی فرار، 262 واپس گرفتار، 575 تاحال مفرورترکی: فسلطینی طلباء کی جاسوسی کرنے والا 15 رکنی صیہونی جاسوس گروہ گرفتار، تحقیقات جاریامریکی انتخابات میں غیر سرکاری تنظیموں کے اثرانداز ہونے کا انکشاف: فیس بک کے مالک اور دیگر ہم فکر افراد نے صرف 2 تنظیموں کو 42 کروڑ ڈالر کی خطیر رقم چندے میں دی، جس سے انتخابی عمل متاثر ہوا، تجزیاتی رپورٹبنگلہ دیش: قرآن کی توہین پر شروع ہونے والے فسادات کنٹرول سے باہر، حالات انتہائی کشیدہ، 9 افراد ہلاک، 71 مقدمے درج، 450 افراد گرفتار، حکومت کا ریاست کو دوبارہ سیکولر بنانے پر غورنیٹو کے 8 روسی مندوبین کو نکالنے کا ردعمل: روس نے سارا عملہ واپس بلانے اور ماسکو میں موجود نیٹو دفتر بند کرنے کا اعلان کر دیاشام اور عراق سے داعش کے دہشت گرد براستہ ایران افغانستان میں داخل ہو رہے ہیں، جنگجوؤں سے وسط ایشیائی ریاستوں میں عدم استحکام کا شدید خطرہ ہے: صدر پوتنآؤکس بین الاقوامی سیاست میں کشیدگی و عدم استحکام بڑھانے اور اسلحے کی نئی دوڑ کا باعث ہو گا: چین اور مشرقی ممالک کے خلاف مغرب کے نئے عسکری اتحاد پر روسی ردعملایف بی آئی نے خفیہ کارروائی میں جوہری آبدوز ٹیکنالوجی بیچتے دو فوجی انجینئر گرفتار کر لیے

امریکہ قومی قرض کی ادائیگی میں دیوالیہ ہو سکتا: تحقیق

بائیپارٹیزن پالیسی مرکز (بی پی سی) کی ایک رپورٹ میں سامنے آیا ہے کہ امریکی وفاقی حکومت یکم اکتوبر 2021 تک قرض لینے کی ملکی حد پار کرے گی، یعنی اسکے قرضے ملکی خزانے سے بڑھ جائیں گے اور حکومت اپنی ادائیگیاں طے کردہ وقت پر پوری طرح ادا نہیں کر پائے گی۔

واشنگٹن ڈی سی میں قائم تحقیقاتی ادارے کے اقتصادی پالیسی کے ڈائریکٹر، شائی اکاباس کے مطابق امریکی خزانہ ممکنہ طور پر مالی سال 2022 کے آغاز تک ایکس ڈیٹ میں آجائے گا، یعنی امریکی وفاقی حکومت اپنے معمولات کی ادائیگی وعدے کے مطابق نہیں کر سکے گی۔

انہوں نے کہا کہ فوری مسئلے کے حل کے لیے ممکنہ طور پر کانگریس آئندہ قرضوں کی ادائیگی کے لیے مختص رقم کو استعمال کرے یا پھر زیر گردش قرضوں کے بوجھ سے نمٹنے کے لیے قانون میں طویل مدتی اصلاحات پیش کرے۔

 انہوں نے خبردار کیا کہ کورونا وباء رواں مالی سال کے قرض کی ادائیگی میں شدید غیر یقینیت پیدا کردی ہے۔ معاشی ماہر نے اس غیر یقینی صورتحال سے نمٹنے کے لیے حکومت کو قرض کی مقررہ حد پر عمل کا مشورہ دیا ہے۔

واضح رہے کہ رپورٹ اس وقت سامنے آئی ہے جب کہ امریکی محکمہ خزانہ نے کانگریس کو خبردار کیا ہے کہ رواں برس بھی حکومت قومی قرضوں کے لیے مقرر حد پر عمل کرنے میں ناکام رہے گی۔

امریکی قومی قرض اس وقت آسمان کی بلندیوں کو چھو رہا ہے، امریکہ مجموعی طور پر اس وقت 28.1 کھرب ڈالر کا مقروض ہے اور امریکی حکومت سماجی تحفظ اور دیگر اخراجات کے لیے قرضے پہ قرضہ لے رہی ہے۔

امریکی حکومت اپنی ہی عوام کی 22.1 کھرب ڈالر کی مقروض ہے، جو مجموعی قومی پیداوار کے 100 فیصد سے بھی زیادہ ہے، امریکی حکومت کے قرض کی سطح کا اندازہ اس چیز سے لگایا جا سکتا ہے کہ یہ اس وقت 1940 میں ملکی قرضوں کی حدوں کو چھو رہا ہے، امریکہ اس وقت دوسری جنگ عظیم میں مشغول تھا، جس کے لیے بھاری قرضے لیے جا رہے تھے۔

دوست و احباب کو تجویز کریں

تبصرہ کریں

Contact Us