بدھ, April 21 Live
Shadow

ابلاغ

ہمارا مقصد ٹرمپ کو نکالنا تھا، ہم کامیاب رہے: سی این این عہدے دار کا صدر ٹرمپ کے خلاف پراپیگنڈے کی مہم کا اعتراف – ویڈیو عیاں

ہمارا مقصد ٹرمپ کو نکالنا تھا، ہم کامیاب رہے: سی این این عہدے دار کا صدر ٹرمپ کے خلاف پراپیگنڈے کی مہم کا اعتراف – ویڈیو عیاں

ابلاغ
معروف امریکی یو ٹیوب چینل ویریٹاس نے سی این این ڈائیریکٹر چارلی چیسٹر کی ویڈیو نشر کی ہے جس میں معروف ٹی وی چینل کے اعلیٰ عہدے دار سابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف باقائدہ پراپیگنڈا مہم چلانے کا اعتراف کرتے دیکھے جا سکتے ہیں۔ ویڈیو میں چارلی بے باکی سے اعتراف کرتے ہیں کہ صدر ٹرمپ کو سرائے ابیض سے ہٹانے میں سی این این کا ہی کردار تھا۔https://youtu.be/Dv8Zy-JwXr4چارلی نے انکشاف کیا ہے کہ کیسے سی این این نے ٹرمپ کے بیمار ہونے کی مہم چلائی، اور جوبائیڈن کو تندرست اور توانا دکھایا۔ جس کا مقصد عام شہریوں کو یہ باور کروانا تھا کہ ٹرمپ صدارت کے لیے موضوع نہیں۔چیسٹر کا کہنا ہے کہ ہم نے ڈاکٹروں کو سکرین پر دکھایا جو ٹرمپ کے بارے میں افواہیں پھیلانے میں ہماری مدد کرتے، اور حتیٰ کہ صدر کے بیمار ہونے کا ذمہ دار بھی انہی کو ٹھہراتے، جیسے کہ صدر کی ہاتھ ملانے کی عادت پر باقائدہ رپورٹیں بنائی ...
جاگو استعماریت دوبارہ سر اٹھا رہی ہے: سی این این کی افغان جنگ کی طوالت کے لیے شروع مہم پر صارفین کا ردعمل

جاگو استعماریت دوبارہ سر اٹھا رہی ہے: سی این این کی افغان جنگ کی طوالت کے لیے شروع مہم پر صارفین کا ردعمل

ابلاغ
امریکی لبرل ٹی وی نیٹ ورک سی این این کی افغانستان سے فوجی انخلاء کے خلاف چلائی جانے والی مہم پر شہریوں کی جانب سے سخت ناراضگی کا اظہار کیا جارہا ہے، صارفین نے اسے استعماری مہم کا نام دیا ہے۔سی این این کا مؤقف ہے کہ امریکی انخلاء سے افغانستان میں خواتین کے حقوق کے لیے جاری جدوجہد کو دھچکہ لگے گا، مہم میں ڈیموکریٹ ارکان کانگریس کے ساتھ ساتھ افغانستان میں امریکی کٹھ پتلی انتظامیہ کے متعدد افراد کو بھی بطور ھوالہ پیش کیا جا رہا ہے جو امریکی انخلاء کو غلطی قرار دے رہے ہیں۔ سی این این کا کہنا ہے کہ امریکہ کو ہر طرح کا دباؤ مسترد کرتے ہوئے افغانستان میں قیام کرنا چاہیے اور انخلاء کیلئے کسی قسم کی تاریخ بھی نہیں دینی چاہیے۔سی این این مہم میں بار بار خواتین اور انسانی حقوق کے تحفظ پر زور دیتے ہوئے امریکہ کو اسکا علمبردار قرار دے رہا ہے اور صدر بائیڈن کے یکم مئی کو مکمل انخلاء کے فیصلے کو د...
جرمنی: اسلامی تنظیموں پر کورونا وباء کے دوران اکٹھا ہونے والے چندے کو دہشتگردی میں استعمال کرنے کا الزام، مسلمانوں کی جانب سے میڈیا مہم کی مذمت

جرمنی: اسلامی تنظیموں پر کورونا وباء کے دوران اکٹھا ہونے والے چندے کو دہشتگردی میں استعمال کرنے کا الزام، مسلمانوں کی جانب سے میڈیا مہم کی مذمت

ابلاغ
جرمنی کے ذرائع ابلاغ نے ملک میں اسلامی تنظیموں پر کووڈ-19 کے دوران لاکھوں یورو چندہ اکٹھا کرنے اور اسے مبینہ طور رپر دہشتگردی میں استعمال کرنے کے شبہے کا اظہار/الزام لگایا ہے۔ صحافتی اداروں کا کہنا ہے کہ پولیس نے 100 سے زائد معاملات میں ہیراپھیری/دھوکہ دہی کی تحقیقات بھی شروع کر دی ہیں۔اسلاموفوبیا پر مبنی خبری مہم کا آغاز ویلٹ ایم سونٹاگ نامی اخبار نے شروع کیا، جس نے دہشتگردوں کو مالی معاونت میں چندے کی رقم کے استعمال کا امکان ظاہر کیا، اور کہا کہ انفرادی امداد کے ایسے واقعات پہلے بھی ہو چکے ہیں، اخبار نے اس حوالے سے سکیورٹی اداروں کے تحفظات کا حوالہ بھی شامل کیا۔ایک رپورٹ میں سکیورٹی اداروں میں پہلے سے جاری انفرادی 100 سے زائد دھوکہ دہی کے واقعات کی تحقیقاتی رپورٹ کو وباء کے چندے سے جوڑ کر پیش کیا گیا اور عوام میں خوف و نفرت پھیلانے کی کوشش کی گئی۔ رپورٹ میں 60 سے زائد مساجد، ادا...
بی بی سی برطانوی راج کی پراپیگنڈا مشین؟: سکاٹ لینڈ وزیر کے حوالے سے غلط بیان شائع کرنے پر برطانوی نشریاتی ادارہ اور صحافی عوامی عتاب کا شکار

بی بی سی برطانوی راج کی پراپیگنڈا مشین؟: سکاٹ لینڈ وزیر کے حوالے سے غلط بیان شائع کرنے پر برطانوی نشریاتی ادارہ اور صحافی عوامی عتاب کا شکار

ابلاغ
سکاٹ لینڈ کے شہریوں کی جانب سے برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کی صحافی سارہ سمتھ کو ادارے سے نکالنے کا مطالبہ کیا جا رہا ہے۔ سارہ سمتھ نے سکاٹی سیاست پر رپورٹ کرتے ہوئے سکاٹ لینڈ کے سابق نمائندہ وزیر ایلکس سیلمنڈ کے حوالے سے غلط بیان دیا تھا۔ سارہ سمتھ نے سابق وزیر کے حوالے سے کہا تھا کہ حالیہ وزیر نیکولا سٹرجن کو مستعفی ہو جانا چاہیے۔https://twitter.com/DavidPSNP/status/1365361573351587851?s=20واضح رہے کہ سکاٹش نیشنل پارٹی کے سابق رہنما ایلکس سیلمنڈ پر جنسی ہراسانی کا الزام ہے، جس کے مواخذے کے لیے وہ ایک سال بعد پارلیمنٹ میں پیش ہوئے تو انہوں نے حالیہ وزیر نیکولا سٹرجن پر الزام لگایا کہ وہ انکے خلاف جھوٹے ثبوت بنانے کی کوشش کر رہی ہیں، جھوٹی گواہیاں تیار کی جا رہی ہیں اور پولیس پر بھی مقدمے کے لیے دباؤ ڈالا جا رہا ہے۔ سیلمنڈ نے اس حوالے سے حالیہ نمائندہ وزیر کے خلاف ثبوت ہونے ...
امریکہ کا ایف-35 لڑاکا طیارے کا منصوبہ تکنیکی بنیادوں پر ناکام قرار: پونے دو کھرب ڈالر اور 20 سال انتظار کے بعد منصوبے کی ناکامی پر شہریوں کا شدید غم و غصے کا اظہار

امریکہ کا ایف-35 لڑاکا طیارے کا منصوبہ تکنیکی بنیادوں پر ناکام قرار: پونے دو کھرب ڈالر اور 20 سال انتظار کے بعد منصوبے کی ناکامی پر شہریوں کا شدید غم و غصے کا اظہار

ابلاغ
امریکی فضائیہ کی جانب سے ایف-35 لڑاکا طیاروں کے ناکام ہونے کے اعتراف نے شہریوں میں غم و غصے کی نئی لہر کو پیدا کیا ہے۔ معروف امریکی جریدے فوربز نے بروز جمعرات ایک تحریرمیں دعویٰ کیا ہے کہ ایف-35 لڑاکا طیارے تکنیکی طور پر ایک ناکام منصوبہ ثابت ہوا ہے۔ امریکی فضائیہ کے پانچویں درجے کے جدید ترین سٹیلتھ لڑاکا طیارے کے منصوبے پر ناکامی پر شہریوں نے سماجی میڈیا پر تنقید میں کہا ہے کہ اس پر خرچ ہونے والے کھربوں ڈالر شہریوں کی زندگی بہتر کرنے پر لگ سکتے تھے لیکن عسکری اسٹیبلشمنٹ نے ایسا نہ ہونے دیا۔https://twitter.com/Forbes/status/1364309072665837569?s=20شہریوں نے ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ناکام عسکری منصوبے کے بجائے ملکی وسائل کو شہریوں کے قرض اتارنے کے لیے استعمال کیا جانا چاہیے تھا۔ یاد رہے کہ ایک محتاط اندازے کے مطابق منصوبے پر پونے دو کھرب ڈالر اخراجات آئے ہیں، اور اب ...
فیس بک نے تشدد پر اکسانے کا الزام لگا کر برمی فوج کا سرکاری مصدقہ صفحہ بند کر دیا

فیس بک نے تشدد پر اکسانے کا الزام لگا کر برمی فوج کا سرکاری مصدقہ صفحہ بند کر دیا

ابلاغ
فیس بک نے برما کی فوج کا مصدقہ نشریاتی صفحہ بند کر دیا ہے۔ فیس بک کا الزام ہے کہ صفحے سے تشدد پر اکسایا جا رہا تھا۔یاد رہے کہ رواں ماہ کے آغاز میں برمی فوج نے منتخب حکومت کا تحتہ الٹتے ہوئے اقتدار پر قبضہ کر لیا تھا، جس کے خلاف شہریوں کا ایک حلقہ مسلسل احتجاج کر رہا ہے۔ اطلاعات کے مطابق مظاہرین کے خلاف طاقت کے استعمال میں اب تک دو شہریوں کی ہلاکت بھی ہو چکی ہے۔فیس بک نے اپنے اقدام میں انہی ہلاکتوں اور صفحے پر شہریوں کو مظاہرے سے روکنے کا جواز بنا کر سرکاری فوج کے مصدقہ صفحے کو بند کیا ہے۔ فیس بک کا کہنا ہے کہ فوج کی ابلاغ عامہ کی ٹیم مسلسل فیس بک کی ہدایات کی خلاف ورزی کر رہی تھی، اسے تشدد پر اکسانے اور شہریوں کو نقصان میں معاونت پر بند کیا گیا ہے۔یاد رہے کہ برما کی فوج عمومی طور پر تات مادو کے نام سے جانی جاتی ہے، جس نے یکم فروری کو آںگ سان سوچی کی حکومت کا تحتہ الٹتے ہوئے ا...
چین میں کورونا کے حوالے سے بی بی سی کی متعصب صحافت پر چین ناراض: معافی کا مطالبہ، برطانوی ادارے کی تردید

چین میں کورونا کے حوالے سے بی بی سی کی متعصب صحافت پر چین ناراض: معافی کا مطالبہ، برطانوی ادارے کی تردید

ابلاغ
بی بی سی نے چینی وزارت خارجہ کے ان الزامات کی تردید کی ہے کہ برطانوی نشریاتی ادارے نے چین میں کورونا وباء سے متعلق غلط اور جھوٹی خبریں چلائیں۔ بی بی سی نے اپنی خصوصی وضاحت میں کہا کہ انکے دیے تمام اعدادوشمار درست تھے اور ادارہ اپنی خبروں کی توثیق کرتا ہے۔https://twitter.com/BBCNewsPR/status/1357328882660179968?s=20برطانوی نشریاتی ادارے کا مزید کہنا تھا کہ بی بی سی عالمی سطح پر پسند کیا جانے والا ابلاغی ادارہ ہے، دنیا بھر میں ہفتہ وار 40 کروڑ سے زائد افراد اسکی خبروں کو پڑھتے اور اس پر یقین کرتے ہیں۔واضح رہے کہ چینی وزارت خارجہ نے بروز جمعرات میڈیا سے گفتگو میں کہا تھا کہ بی بی سی نے چین میں کورونا وباء کے حوالے سے غلط خبریں چلائیں اور ملک کو بدنام کرنے کی کوشش کی، وزارت خارجہ کے ترجمان نے بی بی سی سے معافی کا مطالبہ بھی کیا تھا۔واضح رہے کہ چینی ردعمل برطانوی محکمہ برائے...
برطانیہ: حکومت سماجی میڈیا پر کورونا ویکسین کے خلاف بحث روکنے میں ناکامی پر کمپنیوں کو جرمانے کرے، لیبر پارٹی

برطانیہ: حکومت سماجی میڈیا پر کورونا ویکسین کے خلاف بحث روکنے میں ناکامی پر کمپنیوں کو جرمانے کرے، لیبر پارٹی

ابلاغ, طب
برطانیہ کی لیبرپارٹی نے کووڈ19 کی ویکسین کے خلاف آن لائن بحث کو روکنے کے لیے اسمبلی میں قانونی سازی کی سفارش کر دی ہے۔ پارٹی کا مؤقف ہے کہ سماجی میڈیا کی کمپنیاں غلط معلومات کو روکنے میں بری طرح ناکام ہو چکی ہیں۔شیڈو وزیر جو سٹیون نے ٹویٹ میں کہا کہ حکومت کو ویکسین کے خلاف پراپیگندا روکنے کے لیے کمپنیوں کو پابند کرنا ہو گا۔https://twitter.com/JoStevensLabour/status/1327963294079086593?s=20اس کے علاوہ جو سٹیون اور لیبر جماعت کے سیکرٹری برائے صحت جوناتھن ایشورتھ نے ایک مشترکہ خط میں استدعا کی ہے کہ حکومت ویکسین کے خلاف پراپیگنڈا کو روکنے میں ناکام سوشل میڈیا ویب سائٹوں کو جرمانے کرے اور انکے خلاف مجرمانہ غفلت کی کارروائی کرے۔لیبر نمائندگان کا کہنا تھا کہ حکومت کو آن لائن دنیا میں ویکسین کے خلاف بے وقوفانہ بحث کو روکنے کے لیے متحرک ہونا ہو گا، حکومت عوام میں صحت سے متعلق آ...
شمالی کوریا کی عسکری نمائش کی رپورٹ تائیوان کی ویڈیو کے ساتھ نشر کرنے پر بی بی سی کی جگ ہنسائی

شمالی کوریا کی عسکری نمائش کی رپورٹ تائیوان کی ویڈیو کے ساتھ نشر کرنے پر بی بی سی کی جگ ہنسائی

ابلاغ
برطانوی نشریاتی ادارے کو بروز ہفتہ اس وقت انتہائی شرمندگی اٹھانا پڑی جب اس نے شمالی کوریا کی عسکری نمائش کی رپورٹ میں تائیوان کی عسکری نمائش کی ویڈیو نشر کر دی۔ویڈیو میں واضح طور پر تائیوان کے جھنڈے اور قیادت کو دیکھاجا سکتا ہے تاہم بی بی سی کی غلطی نے اسے سماجی ابلاغی ویب سائٹوں پر صارفین کی تنقد اور مزاح کا خوب نشانہ بنایا۔https://twitter.com/DorinPohPoh/status/1314861233216995328?s=20ایک صارف نے لکھا کہ غلطی جھنڈوں کی مماثلت کی وجہ سے ہو سکتی ہے، جبکہ کچھ نے ادارے کی انتظامیہ کو جاہل اور خطے سے ناواقف قرار دیا۔https://twitter.com/charles04201/status/1314882769307070464?s=20غلطی پر بی بی سی کو بعد میں معافی مانگنا پڑی۔https://twitter.com/LazyWorkz/status/1314798220019671040?s=20...
بی بی سی میزبان کا ماسک نہ پہننے پر شہریوں کو ہراساں کرنا مہنگا پڑ گیا، سوشل میڈیا پر کڑی تنقید

بی بی سی میزبان کا ماسک نہ پہننے پر شہریوں کو ہراساں کرنا مہنگا پڑ گیا، سوشل میڈیا پر کڑی تنقید

ابلاغ
برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کے ایک پروگرام کے میزبان کو سماجی میڈیا پر کڑی تنقید کا سامنا ہے۔ جس کی وجہ انکا شہریوں کو ماسک نہ پہننے پر سڑکوں پر ہراساں کرنا ہے۔سٹیفن نولان نامی میزبان نے اپنے ایک پروگرام کے لیے سڑکوں کا رخ کیا اور وہاں ماسک نہ پہننے والوں کو غیر ذمہ دار پکارتے رہے۔ جس پر شہریوں کی طرف سے سخت تنقید کی جا رہی ہے۔https://twitter.com/vinnybelfast/status/1313931501780766722?s=20ایک شہری نے اپنی رائے میں کہا ہے کہ کچھ شہریوں کا ماسک نہ پہننے والوں پر اعتراض سمجھ میں آتا ہے لیکن کیا اس سے بی بی سی کے میزبان کو شہریوں کو ویڈیو بناتے ہوئے ہراساں کرنے کی اجازت مل جاتی ہے؟ ادارے کی انتظامیہ کی اس بارے میں کیا رائے ہے؟https://twitter.com/DenzilMcDaniel/status/1313918912069881859?s=20ایک اور شہری نے جیسے شدید ناراضگی میں لکھا ہے کہ "نولان خود کو سمجھتا کیا ہ...